اسلام دشمن فلم کیخلاف دنیا بھرمیں احتجاج جاری تیونس میں مظاہرین دروازے توڑ کرامریکی سفارتخانے میں داخل ہوگئے

اسلام دشمن فلم کیخلاف دنیا بھرمیں احتجاج جاری تیونس میں مظاہرین دروازے توڑ ...

لندن (مرزا نعیم الرحمان ) اسلام مخالف فلم کے خلاف پر تشدد احتجاج کئی ممالک میں پھیل گیا ہے مظاہرین نے مشرق وسطی اور شمالی افریقہ میں امریکی سفارتخانوں کا گھیراو کر لیا تیونس میں مظاہرین نے امریکی سفارت خانے میں داخل ہوگئے یمن، مصر، مراکش، سوڈان، تیونس، ایران، بنگلہ دیش اورعراق میں بھی مظاہروں کے دوران امریکی پرچم نذر آتش کر دئیے گئے ادھر امریکہ کے خلاف عرب ممالک میں پھیلنے والے پرتشدد مظاہروں کے بعد امریکہ کے صدر براک اوباما نے وعدہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ بیرون ملک میں موجود امریکیوں کے تحفظ کے لیے جو بھی ضروری ہوگا کیا جائے گا برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق صدر اوباما نے اپنے ایک بیان میں غیر ملکی حکومتوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے ہاں رہنے والے امریکیوں کے تحفظ کو یقینی بنائیں کیونکہ یہ ان کی ذمہ داری ہے جبکہ امریکی وزیر خارجہ ہیلری کلنٹن نے اس فلم کی مذمت کرتے ہوئے اسے قابل نفرت اور غلط اقدام قرار دیا ہے امریکی وزیر خارجہ نے کہا کہ امریکہ اس فلم کے مواد اور اس سے دیے جانے والے پیغام کو قطعی طور پر رد کرتا ہے تاہم انہوں نے کہا کہ اس فلم کی بنیاد پر تشدد نہیں کیا جانا چاہیے امریکہ میں اسلام پر بنی ایک فلم کے کچھ اقتباسات کو انٹرنیٹ پر دیکھے جانے کے بعد مصر سے شروع ہونے والے مظاہرے پوری عرب دنیا میں پھیل گئے ہیں کئی ممالک میں مظاہرین اور پولیس کے درمیان جھڑپیں ہونے کی بھی اطلاعات ہیں مصر کے دارالحکومت قاہرہ میں پولیس اور مظاہرین کی جھڑپیں ہوئیںفلم کے خلاف یمن، مصر، مراکش، سوڈان، تیونس میں احتجاج ہو رہا ہے تیونس میں مظاہرین نے امریکی سفارت خانے میں داخل ہونے کے لئے دروازے توڑ دیئے ۔ ایران، بنگلہ دیش میں ڈھاکہ، عراق میں بصرہ میں بھی مظاہرے کیے گئے ہیں جن میں امریکی پرچم جلایا گیاامریکی حکام نے کہا کہ وہ اس بات کی تفتیش کر رہے ہیں کہ لیبیا میں امریکی سفارت خانے پر حملے کے پیچھے کوئی شدت پسند سازش تھی یا صرف فلم کی وجہ سے لوگوں کی ناراضگی کا نتیجہ تھا یمن میں مظاہرین دارالحکومت صنعا میں واقع امریکی سفارت خانے میں سکیورٹی اہلکاروں کا گھیرا توڑتے ہوئے داخل ہوگئے اور امریکی پرچم کو جلا دیا پولیس اہلکاروں نے مظاہرین پر قابو پانے کی کوشش میں فائرنگ کی ہے لیکن وہ انہیں احاطے میں داخل ہونے سے نہیں روک پائے بہت سے لوگ اس واقعے میں زخمی ہوئے تاہم بعد میں سیکورٹی فورسز نے انہیں منتشر کر دیا صنعا میں عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ سفارت خانے کے اندر کئی گاڑیوں کو آگ لگا دی گئی ہے ادھر مصر میں مسلسل تیسرے روز امریکی سفارت خانے کے باہر مظاہرے ہوئے اور مظاہرین امریکی سفیر کو ملک سے باہر نکالے جانے کا مطالبہ کر رہے تھے پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس کا استعمال کیا جبکہ مظاہرین نے پتھراو¿ کیا مصر کے صدر محمد مرسی نے امن کی اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ پوری عرب دنیا میں غصے کی لہر چل رہی ہے لیکن انہوں نے تمام غیر ملکیوں اور سفارت خانوں کی حفاظت کرنے کا وعدہ کیا ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...