نشتر ٹاﺅن کی 14سٹرکیں تجاوزات میں تبدیل ،پیدل چلنا بھی دشوار

نشتر ٹاﺅن کی 14سٹرکیں تجاوزات میں تبدیل ،پیدل چلنا بھی دشوار

لاہور (جاوید اقبال) نشتر ٹاﺅن کی انتظامیہ کی غفلت سے 14 روڈ تجاوزات میں تبدیل ہو گئے بتایا گیا ہے کہ نشتر ٹاﺅن کے گلی کوچوں سڑکوں اور بازاروں کو تجاوزات کی منڈی بنانے کے ذمہ دار مسلم لیگ (ن) میں جعلی ڈگری کی بناءپر فارغ ہونے والے مقامی ایم پی اے رانا مبشر اقبال کے حقیقی بھائی ٹاﺅن آفیسر ریگولیشن کو قرار دیا جا رہا ہے مقامی انجمن تاجران شہریوں کا کہنا ہے کہ ٹاﺅن آفیسر ریگولیشن رانا عاصم نے اپنے بھائی جو کہ آئندہ انتخابات میں یہاںسے امیدوار ہیں کے ووٹ بچانے کے لئے پورا علاقہ تجاوزات میں تبدیل کردیا ہے جنرل ہسپتال کے سامنے مین بازار قینچی چونگی امر سدھو ،غازی روڈ ٹاﺅن شپ گرین ٹاﺅن مین لنک روڈ سمیت تمام مارکیٹیں اور سڑکات تجاوزات کی نرسریاں بن چکی ہیں اس قدر تجاوزات ہیں کہ پیدل چلنا بھی مشکل ہے۔ مقامی رہنماﺅں سرفراز احمد خان، میاں الطاف، بشیر مغل پیپلز پارٹی کے زونل صدر میاں عباد الحق نے بتایا کہ پورا ٹاﺅن تجاوزات کی منڈی میں تبدیل ہو چکا ہے ٹاﺅن انتظامیہ اور خصوصاً ٹی او آر اور ان کا عملہ یہاں سے لاکھوں روپے یومیہ اکٹھا کرتا ہے اور انہوں نے خود تجاوزات قائم کر رکھی ہیں سروس روڈ فٹ پاتھ تجاوزات سے بھرے پڑے ہیںمین بازار ٹاﺅن شپ گرین ٹاﺅن مین روڈز میں تجاوزات کے باعث ٹریفک جام رہتا ہے اور گھنٹوں لوگ تجاوزات کے باعث ٹریفک میں پھنسے رہتے ہیں گورنمنٹ ہائی سکول کی مین دیوار کے ساتھ مکمل تجاوزات قائم ہیں جن سے ٹاﺅن انتظامیہ بھتہ وصول کرتی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...