اسحاق ڈار کا خورشید شاہ سے رابطہ، چیئرمین نیب کی تقرری پر مشاورت

اسحاق ڈار کا خورشید شاہ سے رابطہ، چیئرمین نیب کی تقرری پر مشاورت

  

اسلام آباد/لندن (آئی این پی )وزیر اعظم نواز شریف کی ہدایت پروفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے قائد حزب اختلاف خورشید شاہ سے لندن ٹیلی فونک رابطہ کرکے چیئرمین نیب کے تقرر کے معاملے پرصلاح مشورہ کیا ۔وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے خورشید شاہ سے شکوہ کیا کہ وہ وزیراعظم کو 2 نئے نام دئیے بغیر لندن چلے گئے جبکہ انہوں نے اے پی سی میں بھی فوری نام دینے کا وعدہ کیا تھا کیونکہ حکومت جلد از جلد چیئرمین نیب کا تقرر کرنا چاہتی ہے۔ اسحاق ڈار نے کہا کہ سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق فوری طور پر چیئر مین نیب کے تقرر کے اقدامات کرنا ہیں،آپ نے کہا تھا کہ لندن جانے سے پہلے اس معاملے پر کسی نتیجے پر پہنچیں گے، آل پارٹیز کانفرنس میں بھی چیئرمین نیب کے تقرر پر بات ہوئی مگر ابھی تک بات نہیں بنی۔ خورشید شاہ نے کہا کہ 19 ستمبر کو وطن واپس پہنچوں گا، اس معا ملے پر اتفاق رائے پیدا کرنے کی کوشش کریں گے۔وفاقی وزیرخزانہ اسحاق ڈار نے میڈیا سے گفتگو کرکے قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ سے رابطے کی تصدیق کی اور کہا کہ چیئرمین نیب کے تقرر کے معاملے پر فوری طور پر مل بیٹھنے پر صلاح مشورہ کیا ہے۔ قائد حزب اختلاف کی واپسی پر جلد از جلد چیئرمین نیب کا تقرر کیا جائے گا۔پیپلز پارٹی کے ذرائع کے مطابق خورشید شاہ کی طرف سے چیئرمین نیب کا نام 16 ستمبر تک دینے کا عندیہ دیا گیا ۔ پیپلز پارٹی کی طرف سے چیئرمین نیب کا نام فائنل کرلیا گیا ہے۔ آئندہ دو روز تک حکومت کو مجوزہ نام سے آگاہ کردیا جائیگا۔ گزشتہ روز سپریم کورٹ نے حکومت کو فوری طور پر چئرمین نیب کا تقرر کرنے کا حکم دیا تھا۔ عدالت نے اپنے حکم میں کہا کہ چئیرمین کا تقرر نہ ہونے کی تمام تر ذمہ داری وفاقی حکومت پر عائد ہوتی ہے۔ انتظامیہ تقرر کرائے بصورت دیگر سنگین نتائج بھگتنے کے لیے تیار رہے۔

مزید :

صفحہ اول -