کراچی جانیوالی عوام ایکسپریس ملتان کے قریب مال گاڑی سے ٹکرا گئی ، 6مسافر جاں بحق ،150سے زائد زخمی ،ڈرائیور اور گارڈ معطل

کراچی جانیوالی عوام ایکسپریس ملتان کے قریب مال گاڑی سے ٹکرا گئی ، 6مسافر جاں ...
کراچی جانیوالی عوام ایکسپریس ملتان کے قریب مال گاڑی سے ٹکرا گئی ، 6مسافر جاں بحق ،150سے زائد زخمی ،ڈرائیور اور گارڈ معطل

  


ملتان(مانیٹرنگ ڈیسک ) بچھ سٹیشن کے قریب عوام ایکسپریس ٹریک پر کھڑی مال گاڑی سے ٹکرا گئی ، حادثے میں 6مسافر جاں بحق اور 150سے زائد زخمی ہو گئے ۔حادثے کے بعد ٹرین کے دونوں ڈرائیورز اور گارڈ کو معطل کردیا گیا ۔

میڈیا رپوٹس کے مطابق کراچی جانیوالی عوام ایکسپریس رات گئے ڈرائیور کی غفلت کے باعث بچھ سٹیشن پر شیر شاہ جنکشن کے قریب ٹریک پر کھڑی مال گاڑی سے جا ٹکرائی ،حادثہ اتنا خوفناک تھا کہ عوام ایکسپریس کا انجن اور چار بوگیاں تباہ ہو گئیں, مال گاڑی کی بھی پانچ بوگیاں پٹری سے اتر گئیں جبکہ 6مسافر موقع پر ہی جاں بحق اور 150سے زائد زخمی ہو گئے جنہیں نشتر ، سول اور شہباز شریف ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے ۔حادثے سے پہلے ٹرین ڈرائیور نے چھلانگ لگا دی۔

زخمیوں میں سے 10 افراد کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے اور ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ بھی ظاہر کیا جا رہا ہے۔عوام ایکسپریس پشاور سے کراچی جا رہی تھی تاہم حادثے کے بعد ریلوے ٹریک کو بند کر دیا گیا ہے۔حادثے کے وقت چاروں بوگیوں میں 350 سے زائد مسافر سوا ر تھے۔

حادثے کے بعد ہر طرف چیخ و پکار شروع ہو گئی اور مسافروں نے اپنی مدد آپ کے تحت زخمیوں کو بوگیوں سے نکالا اور بعد میں ریسکیو حکام کو طلب کیا گیا جنہوں نے 52زخمیوں کو موقع پرہی طبی امداد دیکر فارغ کر دیا جبکہ دیگر زخمیوں اور لاشوں کو ملتان کے تین مختلف ہسپتالوں میں منتقل کر دیا ۔ریسکیو حکام کا کہنا ہے کہ متاثرہ مقام پر 25فگاڑیاں بھجوائی گئی ہیں جبکہ مرنے والوں میں سے دو افراد کی شناخت ہو گئی ہے ۔ ناصر کا تعلق صادق آباد اور سردار کا تعلق رحیم یار خان سے ہے ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ریسکیو اہلکار ایک گھنٹہ تاخیر سے جائے حادثہ پر پہنچے اور اپنے ساتھ ٹارچ لائٹیں بھی نہیں لائے جس سے امدادی کاموں میں شدید دشواری کا سامنا کرنا پڑا اور لائٹ نہ ہونے کے باعث صبح ہونے کا انتظار کیا گیا۔نشتر ہسپتال انتظامیہ نے ایمرجنسی نافذ کر تے ہوئے زخمیوں کے علاج کیلئے لوگوں سے خون کے عطیات کی اپیل کی ہے ۔

ریلوے ذرائع کا کہنا ہے کہ ایک شخص نیچے آجانے کے باعث مال گاڑی شجاع آباد کے قریب رکی ہوئی تھی جہاں عوام ایکسپریس بھی15 منٹ بعد ڈرائیور کی غفلت کی وجہ سے اسی ٹریک پر آگئی جس کے باعث حادثہ رونما ہوا۔

سی ای او ریلوے جاوید انور نے کہا ہے کہ ٹرین حادثے کی ابتدائی رپورٹ تیار کر لی گئی ہے جو حکومت کو بھی بھجوائی گئی ہے ، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ حادثہ عوام ایکسپریس کے ڈرائیور کی غفلت کے باعث پیش آیا ، ڈرائیور نے سگنل کو نظر انداز کیا جو حادثے کا سبب بنا ۔دوسری جانب 

ڈائریکرٹرویجی لینس ریلوے صائمہ بشیر کہتی ہیں کہ ڈرائیور کی غفلت کی وجہ سے حادثہ پیش آیا، مال گاڑی کے رکتے ہی سگنل ریڈ کردیا گیاتھا ، ڈرائیور دیکھ لیتا تو شیر شاہ سٹیشن سے روانہ ہی نہ ہوتا۔

ڈی سی او ملتان  نے کہا ہے کہ دیگر مسافروں کو اپنے مقام پر پہنچانے کیلئےگاڑی منگوا لی ہے ۔ریلوے کے انجینئر متاثرہ بوگیوں کو چیک کر رہے ہیں ۔

وزیر اعظم نواز شریف ،وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور وزیر داخلہ چودھری نثار نے حادثے میں قیمتی جانی نقصان کے ضیاع پر اظہار افسوس کرتے ہوئے اہل خانہ سے اظہار تعزیت کیا ہے  اور زخمیوں کو بہتر طبی امداد فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔دوسری جانب وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے بھی واقعے کی رپورٹ طلب کر لی ہے۔

مزید : ملتان /اہم خبریں


loading...