پاکستانی فلم ”جانان“ لندن میں بھی ریلیز کر دی گئی ، شائقین کی بڑی تعداد پریمئیر شو میں امڈ آئی

پاکستانی فلم ”جانان“ لندن میں بھی ریلیز کر دی گئی ، شائقین کی بڑی تعداد ...
پاکستانی فلم ”جانان“ لندن میں بھی ریلیز کر دی گئی ، شائقین کی بڑی تعداد پریمئیر شو میں امڈ آئی

  


لندن (عرفان الحق)پاکستان فلم ”جانان“ لندن میں بھی ریلیز کر دی گئی جہاںشائقین کی بڑی تعداد فلم کے پریمئیر شو میں شرکت کیلئے امڈ آئی ۔فلم کے پریمئیر میں فلم کے مرکزی کرداروں آرمینا رانا خان ،علی رحمان خان اور بلال اشرف کے علاوہ دیگر افراد نے شرکت کی جہاں مداحوں کی کثیر تعداد موجود تھی جنہوں نے فلم سٹارز کے ساتھ خوب سیلفیاں بھی بنوائیں ۔ 

تفصیلات کے مطابق لندن کے 02 میں پاکستانی فلم ”جانان “کا پریمئیر ہوا جس میں بڑی تعداد میں پاکستانی اور انڈین افراد نے شرکت کی۔ او ٹو کے سینی ورلڈ سینما کے اندر فلم کے مرکزی کرداروں کو ریڈ کارپٹ استقبالیہ دیا گیا۔

پریمئیر کے موقع پر فلم کے ہیرو اور مرکزی کردار بلال اشرف کا کہنا تھا کہ” جانان“ فلم پاکستان اور بالخصوص سوات کے دنیا بھر میں جانے والے منفی تاثر کو دور کرنے کی کوشش ہے تاہم نوجوان نسل کو آگے آنا چاہئے تاکہ ہر کوئی اپنا اپنا حصہ ڈال کر ملک کو آگے لیکر جایا جا سکے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کی فلم انڈسڑی تیزی سے بہتری کی طرف جا رہی ہے آور لوگوں کا سینما کی طرف رجحان بڑھا ہے۔ لوگ جو پہلے بچوں کو سنیما سے منع کرتے تھے اب خود لیکر جاتے ہیں جو اچھی سوچ اور تبدیلی ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے علی رحمان کا کہنا تھا کہ کسی بھی پاکستانی فلم کا دنیا کے سترہ ممالک میں ایک وقت پر ریلیز ہونا اعزاز کی بات ہے۔ آگے مزید اچھا کام کریں گے تاکہ فلم انڈسڑی سمیت پاکستان کا نام روش ہو سکے۔

اس موقع پر فلم کی ہیروئن آرمینیا رانا خان نے کہا کہ” جانان“ میں پاکستان اور سوات کا حقیقی چہرہ دنیا کے سامنے لیکر آئے ہیںاور اس فلم میں تقریباً سارے ہی چہرے نئے تھے اور انہیں پاکستان سمیت ہر جگہ پر پسند کیا جا رہاہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ سوات وادی نظیر ہے اور وہاں کے لوگ بہت پیار کرنے والے اور مِلن سار ہیں۔ سوات پر لگنے والا دھبہ مناسب نہیں تھا اس لئے اس فلم کے ذریعے اس کا اصل چہرہ دیکھانے کی کوشش کی ہے۔ فلم کے دیگر کرداروں کا کہنا تھا کہ فلم سے اچھا پیغام جا رہا ہے اور انہیں خوشی ہو رہی ہے نہ دنیا بھر میں پسند کی جا رہاہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے منیر حسین کا کہنا تھا کہ فلم جانان کی تمام ٹیم جوان اور با صلاحیت ہے اور یہ فلم بہتری کی طرف پہلا قدم ہے۔ آگے مزید اچھا کام ہوگا۔

فلم جانان کے پریمئیر شو میں شرکت کےلئے دیگر ممالک سے بھی لوگوں نے شرکت کی اور اس فلم کو پسند کیا ،بعدازاں سینی ورلڈ میں باقاعدہ کی سپر سکرین پر فلم جانان کو دیکھایا گیا۔ فلم دیکھنے کے لئے بڑی تعداد میں افراد نے سینما کا رخ کیا۔ اورپہلی بار لوگوں کی کثیر تعداد برطانوی سینما میں پاکستانی فلم دیکھنے آئی۔ فلم میں وادی سوات کے کلچر اور اس کے قدرتی مناظر کو ناظرین نے بے حد پسند کیا۔

فلم دیکھنے کے بعد مختلف لوگوں نے گفتگو کرتے ہوئے فلم کو بے حد پسند کیا اور اسے پاکستان فلم انڈسٹریزی کے لئے نیک شگون قرار دیا۔فلم جانان پاکستان کی پہلی فلم ہے جس کو لندن سمیت دنیا کے سترہ ممالک میں شائقین کو دیکھنے کے لئے پیش کی گئی ہے۔

مزید : برطانیہ


loading...