سانحہ شکار پور کے حملہ آور عثمان نے ننگرہار میں تربیت لی،4 مزیدخودکش حملہ آورافغانستان میں موجودہیں،حساس اداروں نے رپورٹ فاش کردی

سانحہ شکار پور کے حملہ آور عثمان نے ننگرہار میں تربیت لی،4 مزیدخودکش حملہ ...
سانحہ شکار پور کے حملہ آور عثمان نے ننگرہار میں تربیت لی،4 مزیدخودکش حملہ آورافغانستان میں موجودہیں،حساس اداروں نے رپورٹ فاش کردی

  


کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) شکار پور میں دہشتگردی کرنیوالے حملہ آوروں بارے حساس اداروں کی رپورٹ جاری کردی گئی،حملہ آور عثمان نے ننگرہار میں تربیت لی،4 تربیت یافتہ خودکش حملہ آورافغانستان میں موجودہیں۔

جیو نیوز کے مطابق شکار پور میں دہشتگردی کرنیوالے حملہ آوروں بارے حساس اداروں کی رپورٹ جاری کردی گئی،رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ شکارپورپہنچنے کے بعددہشتگردوں نے کے کے روڈ پر چائے پی، رات میں قیام بھی کیاگیا،13ستمبر کی صبح 5بجے سفردوبارہ شروع کیا گیا،یہ سفرونگوکی پہاڑیوں کے ذریعے سندھ ،بلوچستان سرحد پرکیا گیا،12ستمبرکو 4افراد نے وڈھ سے شکارپور کا سفر شروع کیا۔

خاتون کونامعلوم جڑواں بچوں کی ماں بنانے پر ڈپٹی ڈائریکٹر نادرا سمیت 3 ملزمان گرفتار

رپورٹ میں یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ شکارپورحملے سے قبل دہشتگردوں کی آخری میٹنگ وڈھ میں ہوئی،عبداللہ نام کاآدمی دونوں حملہ آوروں کوافغانستان سے لایا،شکارپورحملے کے ملزم کی کیمپ میں ایک ماہ تک تربیت ہوتی رہی،شکارپور میں پکڑے گئے حملہ آور عثمان نے ننگرہار میں تربیت لی،4 تربیت یافتہ خودکش حملہ آورافغانستان میں موجودہیں۔

مزید : قومی


loading...