مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر امریکی سینیٹر ز نے بھارت میں اپنی سفیر کو خط لکھ کر تشویش کا اظہار کردیا

مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر امریکی سینیٹر ز نے بھارت میں اپنی سفیر کو خط لکھ ...
مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر امریکی سینیٹر ز نے بھارت میں اپنی سفیر کو خط لکھ کر تشویش کا اظہار کردیا

  


واشنگٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن )مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر 6 امریکی سینیٹرز نے بھارت میں امریکی سفیر کینتھ جسٹر اور پاکستان میں امریکی ناظم الامور پال جونز کو خطوط لکھ کر صورتحال پر تشویش کا اظہار کر دیا ۔نجی نیوز چینل جیو نیوز کے مطابق سینیٹرز نے خط میں امریکی سینیٹرز نے مطالبہ کیا کہ جموں و کشمیر میں عائد پابندیاں اٹھانے، صحافیوں کی وادی میں رسائی، غیر قانونی حراست میں قید کشمیریوں کی رہائی، انسانی حقوق کی آزادانہ تحقیقات، پاکستان بھارت کے درمیان تناو¿ کم کرانے اور کشمیریوں کو حق رائے دہی دلوانے کیلئے بھی بھارتی حکومت پردباو ڈالیں۔ خط میں لکھا ہے کہ ایک ماہ سے زائد عرصے سے بھارتی حکومت نے جموں و کشمیر میں مواصلاتی رابطے بند کر رکھے ہیں اور بھارتی حکومت کی یہ روش جمہوری اور انسانی حقوق دونوں کے منافی ہے۔خط میں کہا گیا ہے کہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں کرفیو، اظہار رائے، اجتماعات اور نقل وحرکت پر بندشیں سب ناقابل قبول پابندیاں ہیں، جموں و کشمیر سے اصل حقائق اور خبریں باہر نہیں آنے دی جارہیں اور بڑی تعداد میں جبری گرفتاریوں، عصمت دری، سیاسی اور مقامی رہنماوں کی گرفتاریوں کی بھی اطلاعات ہیں۔ خط لکھنے والے سینیٹرز میں الہان عمر، رال ایم گریجلوا، اینڈی لیون، جیمز مک گورن، ٹیڈ لیو، ڈونلڈ بیئر اور ایلن لواینتھل شامل ہیں۔

مزید : بین الاقوامی


loading...