کشمیر میں پیلٹ گنوں کا استعمال اور عسکریت پسندی سے متعلق واقعات ہو رہے ہیں: اقوا م متحدہ 

  کشمیر میں پیلٹ گنوں کا استعمال اور عسکریت پسندی سے متعلق واقعات ہو رہے ہیں: ...

  

 اسلام آباد (این این آئی)اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل نے کشمیر پر رپورٹ پیش کر دی  جس میں کہاگیاہے کہ پیلٹ گنوں کا استعمال اور عسکریت پسندی سے متعلق واقعات ہو رہے ہیں۔پیر کو اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کا 45 واں اجلاس جنیوا میں شروع ہوا۔اقوام متحدہ کے انسانی حقوق برائے انسانی حقوق، محترمہ مشیل بیچلیٹ نے کشمیر سمیت دنیا بھر میں انسانی حقوق سے متعلق اپنی رپورٹ پیش کی۔رپورٹ کے مطابق ہندوستان کے زیر انتظام کشمیر میں، شہریوں کے خلاف فوج اور پولیس کے پر تشدد واقعات جاری ہیں، پیلٹ گنوں کا استعمال اور عسکریت پسندی سے متعلق واقعات ہو رہے ہیں۔رپورٹ کے مطابق آئین اور ڈومیسائل قوانین سمیت بڑی قانونی تبدیلیاں گہری بے چینی پیدا کررہی ہیں۔رپورٹ کے مطابق سیاسی بحث و مباحثے اور رائے بنانے کے عمل میں عوام کی شرکت کو سختی سے روکا جا رہا ہے۔رپورٹ کے مطابق میڈیا کے نئے قواعد نے مبہم طور پر "ملک دشمن" رپورٹنگ کی ممانعت کردی ہے۔رپورٹ کے مطابق  سیکڑوں افراد صوابدیدی نظربند ہیں، جبکہ متعدد افراد حبس کو بجا میں رکھا گیا، کچھ سیاسی اور کمیونٹی رہنماؤں کی رہائی کا خیرمقدم کرتے ہیں۔رپورٹ کے مطابق دور دراز علاقوں تک خدمات کی توسیع کے اقدامات، دو اضلاع میں انٹرنیٹ سے مکمل رابطے کی حالیہ مشروط بحالی کا خیرمقدم کرتے ہیں۔رپورٹ کے مطابق اس کا فوری طور پر جموں و کشمیر کے باقی علاقوں پر بھی اطلاق ہونا چا ہیے۔ انہوں نے کہاکہ میرا دفتر کشمیری عوام کے حقوق کو برقرار رکھنے کے لئے، ہندوستان اور پاکستان دونوں کے ساتھ اپنے روابط جاری رکھنے کے لئے پرعزم ہے - رپورٹ کے مطابق یہ روابط مزید کشیدگی اور تنازعات کو روکنے کا بہترین طریقہ ہے۔

اقوام متحدہ   

مزید :

صفحہ آخر -