ماضی میں حکمران طبقے نے ٹیکس نظام، ملکی وسائل کا غلط استعمال کیا: وزیراعظم 

  ماضی میں حکمران طبقے نے ٹیکس نظام، ملکی وسائل کا غلط استعمال کیا: وزیراعظم 

  

 اسلام آباد(سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے سی پیک منصوبے اب مواصلات تک محدود نہیں رہے،رشکئی اقتصادی زون خیبر پختو نخو ا کی معاشی ترقی میں اہم کردار ادا کر ے گا، ملکی ترقی کیلئے صنعتوں کو ترقی دینا ضروری ہے۔ ٹیکس نظام میں اصلاحات حکومت کی اولین ترجیح ہے،منصفانہ اور شفاف ٹیکس نظام موثر طرزحکومت اور عوام کی فلاح و بہبود کو یقینی بنانے کے حوالے حکومتی استعداد کو بہتر بنانے میں کلیدی اہمیت کا حامل ہے، ماضی میں حکمران طبقے نے جہاں اپنے مفادات کیلئے ملکی وسا ئل کا غلط استعمال کیا وہاں ٹیکس کے نظام میں وقتاً فوقتاً اس انداز میں تبدیلیاں اور ردوبدل کیا جاتا رہا ہے کہ ٹیکس کا سارا بوجھ عام عوام اور چھوٹے تاجروں و کاروباری برادری پر پڑتا رہا ہے جس سے چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروبار اور خصوصاً عام آدمی متاثر ہوا ہے۔ وزیرِ اعظم نے اسلامی اقدار اور صوفیائے کرام کی تعلیمات کے فروغ کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا معاشرے کی اصل روح اور معاشرتی اقدار کو اجاگر کرنے کیلئے ضروری ہے کہ نوجوان نسل کو سیرت النبیؐ کے مختلف پہلوؤں اور صوفیائے کرام کی تعلیمات سے روشنا س کرایا جائے۔وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ اگست 2020 میں سمندر پار پاکستانیوں نے ترسیلات زر کی مد میں 2 ہزار 95 ملین ڈالر بھجوائے جو گزشتہ مالی سال کی نسبت کہیں زیادہ ہیں۔انہوں نے ان خیالات کا اظہار پیر کے روز رشکئی خصوصی اقتصادی زون کی ترقی کیلئے معاہدے پر دستخط کی تقریب،اپنی زیر صدارت ملک میں ٹیکس کے نظا م میں اصلاحات، سیرت النبی ؐ اور صوفیائے کرام کی تعلیمات کے فروغ کے حوالے سے تعمیر کی جانیوالی "القادر یونیورسٹی" کے قیام میں پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاسوں  سے خطاب اور سماجی رابطوں کی ویب سایٹ ٹوئٹر پر اپنے ٹویٹ میں کیا۔ وزیراعظم عمران خان کا مزیدکہنا تھا سی پیک کے تحت فیصل آباد کے بعد رشکئی دوسرا خصوصی اقتصادی زون ہوگا۔ سی پیک منصوبے اب صرف مواصلات تک محدود نہیں رہے۔ اس موقع پر وزیراعظم نے انگریزی زبان میں تقریب منعقد کرنے پر ناپسندیدگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہمیں اپنی تقاریب کا انعقاد اردو زبان میں کرنا چاہیے، انہوں نے آئندہ سرکاری تقاریب میں قومی زبان اردو کو ترجیح دینے کی ہدایت کر دی۔ وزیرا عظم نے کہا رشکئی اقتصادی زون خیبر پختو نخوا کی معاشی ترقی میں اہم کردار ادا کرے گا۔چاہتے ہیں خیبرپختونخوا میں رہ کر لوگوں کو ملازمتیں ملیں۔ افغان امن مذاکرات کی کامیابی میں پاکستان کا بڑا ہاتھ ہے، وہاں قیام  امن سے پورے خطے میں خوشحالی آئیگی۔ سی پیک منصوبوں کے تحت پاکستان میں ایم ایل ون ریلوے منصوبہ مکمل کیا جائیگا۔ پاکستان سے افغانستان کے راستے ازبکستان تک ریلو ے لنک قائم ہوگا۔ خیبرپختونخوا کے قبائلی علاقوں کے عوام نے دہشت گردی کیخلاف سب سے زیادہ قربانیاں دیں۔ ماضی میں پاکستان میں صنعتی ترقی پر توجہ نہیں دی گئی۔ 1960ء کی دہائی میں پاکستان میں صنعتی ترقی ہو رہی تھی جو صنعتوں کو نیشنلائز کرنے کے باعث رک گئی تھی۔ ملک میں ترقی کیلئے صنعتوں کو ترقی دینا بہت ضروری ہے۔ٹیکس میں ااصلاحات سے متعلق ہونیوالے اجلاس میں نظام میں موجود خرابیوں کو دور، مراعات یافتہ طبقات کی جانب سے ٹیکس نظام کے غلط استعمال کو روکنے، ٹیکس کی چوری اور ٹیکس اہلکاروں کی بدعنوا نیوں کے خاتمے اور نظام میں شفافیت کو یقینی بنانے کے حوالے سے مختلف تجاویز وزیرِ اعظم کو پیش کی گئیں۔ وزیرِ اعظم کا کہنا تھا ٹیکس نظام میں اصلاحات حکومت کی اولین ترجیح ہے تاکہ اس نظام کو منصفانہ اور شفاف بنایا جا سکے۔ وزیر اعظم نے ٹیکس نظام میں اصلاحات سے متعلق پیش کی جانیوالی تجاویز کا خیر مقدم کیااور ہدایت کی کہ ان تجاویز کا تفصیلی جائزہ لیا جائے تاکہ قابل عمل تجاویز پر عملدرآمد کیا جا سکے۔القادر یونیورسٹی کے قیام میں پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاس میں وزیرِ اعظم کو اب تک ہونیوالی پیش رفت سے تفصیلی طور پر آگاہ کیا گیا۔ انہوں نے کہا  القادر یونیورسٹی میں صوفیائے کرام کی تعلیمات کیساتھ ساتھ جدید تعلیم کی بھی منصوبہ بندی کی جائے تاکہ طلبہ کو دورِ حاضر کے چیلنجز سے نمٹنے کیلئے مکمل طور پر تیار کیا جا سکے۔ وزیرِ اعظم نے یونیورسٹی کی تعمیر کا کام تیز کرنے کی بھی ہدایت کی۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ وزیر اعظم عمران خان نے کہا ماہ اگست میں اوورسیز پاکستانیوں نے ترسیلات زر کی مد میں 2ہزار 95 ملین ڈالر بھجوائے جو گزشتہ سال اگست کے مقابلے میں 24.4 زیادہ ہیں۔ جولائی 2020 میں یہ ترسیلات 2 ہزار 768 ملین کی ریکارڈ سطح تک پہنچیں۔ رواں مالی سال کے پہلے 2 ماہ کے دوران یہ ترسیلا ت گزشتہ برس کے اسی دورانیہ کی نسبت 31 فیصد زیادہ رہیں۔

وزیر اعظم 

مزید :

صفحہ اول -