اگر پھانسیاں دینے سے معاملہ حل ہوتا تو۔۔۔۔وفاقی وزیر فو اد چوہدری بھی میدان میں آگئے

اگر پھانسیاں دینے سے معاملہ حل ہوتا تو۔۔۔۔وفاقی وزیر فو اد چوہدری بھی میدان ...
اگر پھانسیاں دینے سے معاملہ حل ہوتا تو۔۔۔۔وفاقی وزیر فو اد چوہدری بھی میدان میں آگئے

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی چوہدری فواد حسین نے کہا ہے کہ  عورتوں کا دکھ عورت ہی سمجھ سکتی ہے، زینیب کیس میں دو ہفتے  بھی کیس  نہیں چلا اور مجرم کو پھانسی ہوئی،اگر پھانسیاں دینے سے معاملہ حل ہوتا تویہ معاملہ آسان تھا،حل صرف یہ ہے کہ نظامِ انصاف میں اصلاحات کی جائیں،سانحہ موٹروے نےبلاشبہ اس نے معاشرے کو جھنجوڑ کر رکھ دیا ہے، ایسے واقعات پے در  پے ہو رہے ہیں، روزانہ اس قسم کا کوئی واقعہ سامنا آتا ہے، ایک مہینہ ہم ان واقعات کا ماتم کرتے ہیں پھر بھول جاتے ہیں۔

نجی ٹی وی کےمطابق قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی  فو اد چوہدری نے کہا کہجو سانحہ ہوا، بلاشبہ اس نے معاشرے کو جھنجوڑ کر رکھ دیا ہے، ایسے واقعات پے در  پے ہو رہے ہیں، روزانہ اس قسم کا کوئی واقعہ سامنا آتا ہے، ایک مہینہ ہم ان واقعات کا ماتم کرتے ہیں پھر بھول جاتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہر سال اوسطا پاکستان میں 5 ہزار ریپ کے واقعات ہوتے ہیں، یہ وہ کیسز ہیں جو رپورٹ ہوئے، بے شمار لوگ یہ کیسز رجسٹر ہی نہیں کراتے، عابد ملزم کے بارے میں کہا رہا ہے کہ وہ پہلے بھی ریپ کیس میں پکڑا گیا   مگر صلح ہو گئی، اگر پھانسیاں دینے سے معاملہ حل ہوتا تویہ معاملہ آسان تھا، زینب کے کیس میں کیس دو ہفتے  بھی نہیں چلا مجرم کو پھانسی ہوئی۔ فواد چوہدری نے کہا کہ حل صرف یہ ہے کہ نظام انصاف میں اصلاحات کی جائیں، اصلاحات کی ضرورت ہے، عورتوں کا دکھ عورت ہی سمجھ سکتی ہے

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -