آکسیجن کی من مانی قیمتوں پر فروخت تشویشناک ہے،پی ایم اے

آکسیجن کی من مانی قیمتوں پر فروخت تشویشناک ہے،پی ایم اے

  

لاہور(جنرل رپورٹر)پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن،  میڈیا میں نشر ہونے والی اُس خبر پر گہری تشویش کا اظہار کرتی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ کراچی اور اندرون سندھ میں آکسیجن گیس کی سپلائی میں کمی واقع ہو رہی ہے اور اس کمی کی وجہ سے سپلائرز زیادہ منافع خوری کیلئے من مانی قیمت پر گیس فروخت کر رہے ہیں جو کہ بہت غیر اخلاقی عمل ہے۔ہسپتالوں میں کیونکہ آکسیجن کی اس کمی کے باعث خطرناک صورتحال پیدا ہو سکتی ہے کیونکہ ہسپتالوں میں چند منٹ کی بندش کے باعث ہزاروں مریضوں کی زندگیاں خطرے میں پڑ سکتی ہیں۔ اگرچہ اس وقت ہسپتالوں میں کووڈ۔19 کے مریضوں کا بوجھ کم ہے لیکن یہ کسی وقت بھی بڑھ سکتا ہے۔

 کیونکہ ہم ہمیشہ سے کووڈ۔19 سے متعلق ایس او پیز پر عمل درآمد کرنے میں ہچکچاہٹ کا شکار رہے ہیں۔ کووڈ۔19 کے علاج میں اور دیگر سیریس مریضوں میں آکسیجن تھریپی انتہائی ضروری ہے۔پی ایم اے،  حکومت سندھ سے درخواست کرتی ہے کہ وہ اس صورتحال کا فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے ہسپتالوں میں لیکوئیڈ آکسیجن کی مسلسل فراہمی کو مناسب قیمت پر یقینی بنائے بصورت دیگر اس کمی کے باعث مستقبل قریب میں ملک میں انسانی المیہ جنم لے سکتا ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -