پاکستان کو رواں ہفتے برطانوی ریڈ لسٹ سے نکالے جانے کی پیشگوئی

پاکستان کو رواں ہفتے برطانوی ریڈ لسٹ سے نکالے جانے کی پیشگوئی
پاکستان کو رواں ہفتے برطانوی ریڈ لسٹ سے نکالے جانے کی پیشگوئی

  

لندن(ڈیلی پاکستان آن لائن)برطانوی تجزیہ کاروں نے پاکستان کو رواں ہفتے ریڈ لسٹ سے نکالے جانے کی پیشگوئی کردی ، جس کے بعد پاکستان ہائی کمیشن نے ریڈ لسٹ سے نکلنے کےلئے کوششیں مزید تیز کر دیں۔

نجی ٹی وی کے مطابق برطانوی تجزیہ کاروں نے پیشگوئی کی کہ پاکستان رواں ہفتے ریڈلسٹ سے نکل جائے گا ، میڈیا رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جنوبی افریقہ، ترکی ،پاکستان ریڈ لسٹ سے نکلنے کیلئے موزوں ترین ہیں۔برطانوی میڈیا کے مطابق پاکستان نے30روزمیں امبرلسٹ ممالک جیسی جینومک سیکوئنسنگ کی، پاکستان، ترکی،جنوبی افریقہ سے سنگین ویرئینٹ برطانیہ نہیں آیا، برطانیہ کی ریڈ لسٹ میں 62 ممالک شامل ہیں۔پاکستان ہائی کمیشن نے ریڈ لسٹ سے نکلنے کےلئے کوششیں مزید تیز کر دیں ، اس حوالے سے پاکستانی ہائی کمشنر معظم احمد خان نے اہم شخصیات سے ملاقاتیں بھی کیں۔

واضح رہے کہ برطانیہ کی جانب سے پاکستان کو کورونا ریڈ لسٹ میں رکھنے کے تناظر میں کابینہ نے 9 ستمبر کو برطانوی چارٹر طیارے کی پاکستان لینڈنگ سے متعلق ایم او یو کی منظوری روک دی تھی  جبکہ اس سے قبل  برطانوی اراکین پارلیمنٹ یاسمین قریشی اور رحمان چشتی نے پاکستان کو ریڈلسٹ میں رکھنے کے معاملے پر برطانوی سیکرٹری ہیلتھ ساجد جاوید  کوخط لکھا ، جس میں کہا تھا کہ پاکستان کوآئرلینڈسمیت متعدد یورپی ممالک نےاپنی ریڈلسٹ سےخارج کردیا ہے لہذا برطانیہ بھی پاکستان کو فوری ریڈ لسٹ سےنکالنے کے لئےاقدامات کرے ، امید ہے نئے اعداد و شمار کے بعد پاکستان کوریڈ لسٹ سے خارج کردیا جائے گا۔

مزید :

بین الاقوامی -