جنوبی کوریا نے زراعت کی دنیا میں تہلکہ برپا کردیا، ناقابل یقین طریقہ متعارف کروادیا

جنوبی کوریا نے زراعت کی دنیا میں تہلکہ برپا کردیا، ناقابل یقین طریقہ متعارف ...
جنوبی کوریا نے زراعت کی دنیا میں تہلکہ برپا کردیا، ناقابل یقین طریقہ متعارف کروادیا

  



سیول (نیوز ڈیسک) جدید شہروں میں آسمان کو چھوتی عمارتیں اور سڑکوں پر دوڑتی بے شمار گاڑیاں تو نظر آتی ہیں مگر یہ قدرتی تازگی سے بھرپور فصلوں اور پودوں سے محروم ہیں۔ جنوبی کوریا کی حکومت نے اس مسئلے کا نہایت خوبصورت حل دریافت کرتے ہوئے ایسی کثیر المنزلہ عمارتیں بنانے کا منصوبہ متعارت کروایا ہے کہ جن میں دفاتر یا شاپنگ سنٹر نہیں ہوں گے بلکہ ان میں ہری بھری فصلیں اگائی جائیں گی۔

این اے 246، رینجرز کی تجاویز پر عملدرآمد کیلئے وقت کم ہے: قائم علی شاہ

 ”عمودی کھیت“ کہلانے والی ان عمارتوں کی تعمیر کا آغاز مغربی شہر یانگ شیون سے کیا جائے گا اور اس کے بعد ملک کے دیگر حصوں میں بھی عمودی کھیت تعمیرکئے جائیں گے۔ یہ عمارتیں تین منزلہ ہوں گی جن کی دوسری اور تیسری منزل پر مختلف فصلیں، سبزیاں اور پھل اگائے جائیں گے جبکہ پہلی منزل کو کاشتکاری کے تربیتی سکولوں کے طور پر استعمال کیا جائے گا۔ پوری عمارت میں فصلوں کو درکار روشنی، درجہ حرارت، نمی اور پانی کو کمپیوٹر ٹیکنالوجی سے کنٹرول کیا جائے گا۔

جنوبی کوریائی حکام کا کہنا ہے کہ عمودی کھیتوں سے نہ صرف شہر میں بسنے والوں کو تازہ سبزیاں اور پھل میسر آئیں گے بلکہ شہری علاقوں میں ہرے بھرے کھیتوں کا نظارہ بھی دیکھنے کو ملے گا۔ جاپانی کمپنی الیکٹرانک پیناسونک اس سے پہلے سنگا پور میں دنیا کا پہلا عمودی کھیت قائم کرنے کا کامیاب تجربہ کرچکی ہے۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی


loading...