قحبہ خانے سے برآمد ہونے والی 9 خواتین اشتہاری قرار

قحبہ خانے سے برآمد ہونے والی 9 خواتین اشتہاری قرار

  



 لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج نے نعیم عباس نے قحبہ خانے سے برآمد ہونے والی 9 خواتین کو عدالتی حکم کے باوجود عدالت میں پیش نہ ہونے پر اشتہاری قرار دے دیا ہے جبکہ فاضل جج نے سی سی پی او لاہور کو حکم دیا ہے کہ مذکورہ مقدمہ میں مزید گواہوں کی حاضری کو عدالت میں 23اپریل تک یقینی بنایا جائے مذکورہ مقدمہ کا چالان اعلی عدالت کے حکم پر راولپندی سے لاہور منتقل کیا گیا ہے عدالت میں ایک مکان میں محبوس رکھی جانے والی حنا عظیم سیمت 9خواتین کے ملزم جمال خان کا چالان پیش کررکھا ہے جبکہ مقدمہ کا ملزم جمال خان عدالت میں پیش ہورہا ہے لیکن عدالتی حکم کے باوجود لڑکیاں پیش نہ ہوئیں جس پر عدالت نے حنا ، ماریہ ، پروین، کرن وغیرہ 9 خواتین کواشتہاری قرار دے دیا ہے ،استغاثہ کے مطابق ملزم جمال خان پر الزام ہے کہ وہ لڑکیوں کو نوکری دلوانے کا جھانسہ دے کر ان کی مجبوری سے فائدہ اٹھاکرانہیں غیر مردوں کے سامنے پیش کرتا تاہم لڑکیوں کے انکار پر انہیں بلیک میل کرتا اور خواتین کو بیرون ملک سمگل کرانے کی دھمکیاں دیتا تھا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4