آٹھ سالہ بچی کے ساتھ شادی کا مقدمہ ،دلہا سمیت2ملزمان عدالت میں پیش

آٹھ سالہ بچی کے ساتھ شادی کا مقدمہ ،دلہا سمیت2ملزمان عدالت میں پیش

  



لاہور(نامہ نگار)آٹھ سالہ بچی کے ساتھ زبردستی شادی کے مقدمہ میں ملوث 20سالہ دلہا سمیت2ملزمان کو تھانہ نواب ٹاؤن پولیس نے گزشتہ روز مقامی عدالت میں پیش کردیا،فاضل جج نے دونوں ملزمان کو 14روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بجھوادیا ہے ۔مقامی عدالت میں تھانہ نواب ٹاؤن پولیس نے گزشتہ روز ملزمان جس میں دلہا خصر اور بچی سمیرا کے والد عباس کو پیش کیا ،پولیس کی جانب سے عدالت میں موقف اختیار کیا گیا کہ مذکورہ ملزمان کی جانب سے کمسن بچی کی زبردستی شادی کی جارہی تھی جس پر پولیس نے محلہ داروں کی اطلاع پر چھاپہ مار کر انہیں گرفتار کرلیا جبکہ ملزمان کا کہنا تھا کہ شادی نہیں صرف منگنی کی جا رہی تھی، عدالت نے دلائل سننے کے بعد ملزموں کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا نے کا حکم دیتے ہوئے مقدمہ کی سماعت آئندہ پیشی تک ملتوی کردی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4