این اے 108ضمنی انتخاب ،پیپلز پارٹی کا متفقہ امیدوار لانے کیلئے غور

این اے 108ضمنی انتخاب ،پیپلز پارٹی کا متفقہ امیدوار لانے کیلئے غور

  



 لاہور( نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی سنٹرل پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو کی زیر صدارت میں پارٹی سیکریٹریٹ میں اجلاس ہوا جسمیں این اے 108منڈی بہاؤالدین میں ہونے والے ضمنی انتخاب کے لیے پیپلز پارٹی کا متفقہ امیدوار لانے کے لیے غور کیا گیا۔ یادرہے کہ اس حلقے سے اعجاز احمد چوہدری کی اسمبلی کی ممبر شپ اثاثے چھپانے او ر جعلی ڈگری کی وجہ سے ختم ہو ئی تھی ۔ اجلاس میں واضح کیا گیا کہ امیدوار پیپلز پارٹی سے ہی ہو گا۔ صدر پیپلز پارٹی سنٹرل پنجاب نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ ہم اس متفقہ امیداور کا فیصلہ کریں گے جس کو مقامی پارٹی کی تنظیم اور صوبائی سطح کی پارٹی کی قیادت کی مکمل حمایت حاصل ہو ۔انہوں نے اطمینان کا اظہار کیا کہ اجلاس میں مقامی پارٹی کے نمائندگان موجو د ہیں جس سے متفقہ امیدوارکا فیصلہ کرنے میں بڑی مدد ملے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی پاکستان کی سب سے بڑی سیاسی نظریاتی پارٹی ہے اور اس کے کارکن شہید ذوالفقار علی بھٹو اور شہید محترمہ بے نظیر بھٹو کے سیاسی فلسفے سے محبت کرتے ہیں اور اس کو عملی جامہ پہنانے کے لیے انکی جدوجہد کا کوئی ثانی نہیں۔ اجلاس میں سیکریٹری جنرل پیپلز پارٹی تنویر اشرف کائرہ، ندیم افضل چن، پولیٹیکل ایڈوائزرٹوکوچےئرمین، نذر محمد گوندل، سابق وفاقی وزیر، منظور مانیکا، دیوان شمیم، ضلعی صدر منڈی بہاؤالدین کے علاوہ سات( 7) متوقع امیدوار بھی شریک تھے۔پارٹی کے متفقہ امیدوار کا فیصلہ کل تک متوقع ہے۔ منظور وٹو

مزید : صفحہ آخر


loading...