دنیا کے وزنی ترین بچوں کی جان بچانے کیلئے غریب باپ نے ناقابل یقین قربانی دینے کافیصلہ کر لیا

دنیا کے وزنی ترین بچوں کی جان بچانے کیلئے غریب باپ نے ناقابل یقین قربانی دینے ...
دنیا کے وزنی ترین بچوں کی جان بچانے کیلئے غریب باپ نے ناقابل یقین قربانی دینے کافیصلہ کر لیا

  



نئی دلی (نیوز ڈیسک)بھارت سے تعلق رکھنے والے تشویشناک حد تک موٹے بچوں کا وزن خوفناک حد تک بڑھنے کے بعد ان کے والد نے اپنا گردہ بیچ کر بچوں کے علاج کی کوشش شروع کردی ہے ۔

ریاست گجرات سے تعلق رکھنے والے مزدور رامیش بھائی نندوانہ کی پانچ سالہ بیٹی کا وزن 48کلوگرام ،تین سالہ بیٹی کا وزن 34کلو گرام جبکہ ڈیڑھ سالہ بیٹی کا وزن 15کلوگرام ہے ۔ بچوں کی والدہ پراگنا بین کا کہنا ہے کہ اس کا سارا دن باورچی خانہ میں گزرتا ہے کیونکہ اس کے بچوں کی بھوک ختم ہونے میں نہیں آتی اور وہ سارا دن کھانے کے لیے چیخ و پکار کرتے رہتے ہیں۔ یہ بچے اس قدر بھاری بھرکم ہیں کہ انکی والدہ انہیں اٹھا بھی نہیں پاتی اور یہ اپنے طور پر چلنے کے قابل بھی نہیں ہیں ۔

مزیدپڑھیں:اس بچے کی تصویر تو آپ نے دیکھی ہوگی لیکن اب اسے آپ کی مدد کی ضرورت ہے، دنیا کے مشہور ترین بچے کی کہانی

بڑی بچیاں یوگیتا اور انیشا صبح 6بجے کھانے کا آغاز کرتی ہیں ۔ان کے پہلے کھانے میں 5کیلے،1لیٹر دودھ،6چپاتیاں اور سبزی کا ایک بڑا پیالہ شامل ہوتا ہے۔10بجے یہ بچیاں 5چپاتیاں،دہی کا پیالہ اور سبزی کا ایک پیالہ کھاتی ہیں۔ ساڑھے 12بجے ان کے لیے باجرے کی روٹی تیار کی جاتی ہے اور ساتھ 2کیلے،سبزی کا پیالہ اور چپس کے 4پیکٹ کھلائے جاتے ہیں۔3بجے یہ باجرے کی روٹی اور سبزی کے ساتھ چاول کھاتی ہیں۔ 5بجے 1لیٹر کولڈڈرنک ،چپس کے 6پیکٹ ،بسکٹ کے 5پیکٹ اور 5کیلے کھاتی ہیں۔ رات 8بجے دونوں بچیاں دن کا آخری کھانہ کھاتی ہیں جس میں 6چپاتیاں،1لیٹر دودھ ،ڈیڑھ لیٹر لسی اور سبزے کے 2بڑے پیالے شامل ہوتے ہیں۔

بچیوں کے والد کا کہنا ہے کہ ڈاکٹروں نے انہیں بہت مہنگا علاج بتایا ہے اور وہ اپنی بچیوں کی زندگی بچانے کے لیے اپنا گردہ فروخت کرنے پر غور کررہے ہیں ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...