ایم کیو ایم کی تنظیمی کمیٹی کے سابق انچارج حماد صدیقی ”گھوسٹ “ نکلے

ایم کیو ایم کی تنظیمی کمیٹی کے سابق انچارج حماد صدیقی ”گھوسٹ “ نکلے
ایم کیو ایم کی تنظیمی کمیٹی کے سابق انچارج حماد صدیقی ”گھوسٹ “ نکلے

  



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) شہر قائد کو لاحق مصیبتوں میں سے ایک مصیبت سرکاری اداروں میں ”تعینات“ گھوسٹ ملازمین بھی ہیں اور صوبائی حکومت کی جانب سے اب تک کئی گھوسٹ ملازمین کا ”کھاتہ“ ختم کر دیا گیا ہے تاہم اب یہ انکشاف ہوا ہے کہ سیاسی جماعتوں کے رہنماءاور کارکن بھی گھوسٹ ملازمین بن کر عوام کے ٹیکس سے بھرے جانے والے سرکاری خزانے کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم تنظیمی کمیٹی کے سابق انچارج حماد صدیقی بھی گھوسٹ ملازم نکلے جو ہر ماہ کچھ کام کئے بغیر ہی سرکاری خزانہ سے 40 ہزار 600 روپے وصول کر رہے ہیں۔ ذرائع کے مطابق حماد صدیقی رفیقی شہید ہسپتال میں گریڈ 19 کے افسر ہیں اور بطور ڈائریکٹر ان کا تقرر نامہ 28 نومبر 1997 ءکو جاری ہوا۔ حماد صدیقی 22 مئی 2013ءکو کراچی سے دبئی چلے گئے تھے تاہم ہر ماہ 40 ہزار 600 روپے تنخواہ کی مد میں ان کے اکاﺅنٹ میں ٹرانسفر ہو رہی تھی۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...