کتے کے گوشت کو 'بیف'کہہ کر بیچنے والا ریسٹورنٹ پکڑا گیا

کتے کے گوشت کو 'بیف'کہہ کر بیچنے والا ریسٹورنٹ پکڑا گیا
کتے کے گوشت کو 'بیف'کہہ کر بیچنے والا ریسٹورنٹ پکڑا گیا

  



برازیلیا(نیوز ڈیسک)برازیل میں حکام نے ایک ایسا سنیک بار پکڑ لیا ہے جو کسٹمرز کو قیمے والی پیسٹریاں کھلا رہا تھا لیکن یہ نہیں بتا رہا تھا کہ قیمہ بیف سے نہیں بلکہ آوارہ کتوں کے گوشت سے بنایا جارہا تھا۔

اس آدمی نے انڈا توڑا ، اندر سے کیا نکلا؟جان کر آپ کی حیرت کی انتہا نہ رہے گی

ریو ڈی جنیرو شہر میں واقع سنیک بار کے تہہ خانے میں نا صرف غیر ملکی ملازمین کو قید کرکے رکھا گیا تھا بلکہ اس میں پڑے درجنوں فریزروں میں کتوں کا گوشت محفوظ کیا گیا تھا۔ ریسٹورنٹ کے 32سالا مالک وان رولونگ نے اعتراف کیا ہے کہ تہہ خانے سے ملنے والا گوشت بیف نہیں ہے بلکہ ان کتوں کا گوشت ہے جنہیں شہر کی سڑکوں سے پکڑ کرلایا جاتا تھا ۔

پبلک پراسیکیوٹر گواڈا لوپے لورو کوٹو کا کہنا ہے کہ کتوں کو سر پر آہنی سلاخوں کے وار کرکے مارا جاتا تھا اور ان کے گوشت کو جس تہہ خانے میں محفوظ کیا جاتا تھا وہاں بدبو کے باعث داخل ہونا بھی تقریباً ناممکن تھا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...