دبئی میں اب سڑکوں پر ایک ایسے طریقے سے انٹرنیٹ فراہم کیا جائے گا جو اس سے پہلے کبھی کسی نے دیکھا نہ سنا

دبئی میں اب سڑکوں پر ایک ایسے طریقے سے انٹرنیٹ فراہم کیا جائے گا جو اس سے پہلے ...
دبئی میں اب سڑکوں پر ایک ایسے طریقے سے انٹرنیٹ فراہم کیا جائے گا جو اس سے پہلے کبھی کسی نے دیکھا نہ سنا

  

دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا بھر میں سٹریٹ لائٹس سڑکوں سے اندھیرا دور کرنے کے لیے استعمال کی جاتی ہیں لیکن اب دبئی میں انہیں لوگوں کو انٹرنیٹ فراہم کرنے کے لیے استعمال کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ ایمریٹس 24/7کی رپورٹ کے مطابق دبئی میں کام کرنے والی ٹیکنالوجی کمپنی زیرو1نے اعلان کیا ہے کہ وہ رواں سال کے آخر تک سٹریٹ لائٹس کے 100کھمبوں سے شہریوں کو انٹرنیٹ فراہم کرے گی۔ کمپنی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر مارک فلیسچن کا کہنا ہے کہ ”لائٹس کے کھمبوں سے انٹرنیٹ فراہم کرنے میں جدید ترین ٹیکنالوجی لائی فائی(LiFi) استعمال کی جائے گی۔ اس ٹیکنالوجی میں ایل ای ڈی بلب سے انٹرنیٹ خارج ہوتا ہے جسے صارفین استعمال کر سکتے ہیں۔“

سعودی ارب پتی جس نے عیاشی کے تمام ریکارڈ توڑ دئیے، پیسے لٹانے کا ایسا طریقہ کہ دیکھ کر کوئی بھی کانوں کو ہاتھ لگانے پر مجبور ہوجائے

مارک کا مزید کہنا تھا کہ ”لائی فائی انٹرنیٹ کی سپیڈ موجودہ وائی فائی سے کہیں زیادہ تیز یعنی 224جی بی فی سیکنڈ تک ہو گی۔ ہمیں فخر ہے کہ زیرو1پہلی کمپنی ہے جو مشرق وسطیٰ میں انٹرنیٹ کی فراہمی کے لیے یہ لائی فائی ٹیکنالوجی متعارف کروانے جا رہی ہے۔ہم اس منصوبے پر ٹیکنالوجی کمپنی ”ڈو“(Du) کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں۔مستقبل میں ہم اس منصوبے کو دبئی کے دیگر علاقوں میں بھی پھیلائیں گے۔ “ انہوں نے بتایا کہ ” بجلی کے کھمبوں پر جو ایل ای ڈی بلب لگائے جائیں گے انہیں وائرلیس راﺅٹرز میں تبدیل کر دیا جائے گااور ان میں ایک چھوٹی مائیکروچپ لگا دی جائے گی۔ اس چپ کے لگانے سے یہ بلب لائی فائی سروس فراہم کرنے کے قابل ہو جائیں گے۔“

مزید :

عرب دنیا -