گھر میں پانی کے پائپ میں خرابی نے دنیا بدل دی، ایسی چیز نکل آئی کہ شہری 14 ارب روپے کا مالک بن گیا

گھر میں پانی کے پائپ میں خرابی نے دنیا بدل دی، ایسی چیز نکل آئی کہ شہری 14 ارب ...
گھر میں پانی کے پائپ میں خرابی نے دنیا بدل دی، ایسی چیز نکل آئی کہ شہری 14 ارب روپے کا مالک بن گیا

  

پیرس (نیوز ڈیسک) پرانے گھروں کی مرمت کے دوران عموماً ناکارہ اشیاءہی برآمد ہوتی ہیں، لیکن فرانس میں ایک گھر کی ٹپکتی چھت کے اندر موجود پائپ کی مرمت کرنے کا فیصلہ کیا گیا تو ایسی چیز برآمد ہوگئی کہ گھر والوں کی قسمت ہی بدل گئی۔

امریکی ٹی وی سی این این کے مطابق تولوز شہر کے ایک گھر کی چھت میں ہونے والے لیکج کا مسئلہ حل کرنے کے لئے چھت کے اوپر واقع بالا خانے میں توڑ پھوڑ کی گئی تو دیوار میں بنے ایک خفیہ خانے سے چار صدیاں پرانی پینٹنگ برآمد ہوگئی۔ بظاہر عجیب و غریب اور بے معنی نظر آنے والی پینٹنگ کو معائنے کے لئے آرٹ کے ماہرین کے پاس بھیجا گیا اور جب نتائج سامنے آئے تو دنیائے آرٹ میں تہلکہ برپاہوگیا۔ ماہرین نے دو سال کی تحقیق کے بعد بالآخر یہ ثابت کردیا کہ یہ پینٹنگ مشہور اطالوی مسور کاراواگیو کا شاہکار ہے، جس میں تاریخی کردار جوڈتھ، اسیرین جنرل پولو فرنیس کا سر قلم کرتی دکھائی گئی ہے۔

دنیا کی شرمناک ترین جگہ، سب سے بڑا شہر جہاں کوئی بھی کپڑے نہیں پہنتا اور جانے والوں کیلئے بھی ایسا کرنا ضروری ہے

آرٹ ماہرین نے اس نایاب پینٹنگ کی قیمت کا اندازہ 13.6 کروڑ ڈالر (تقریباً 13 ارب 60 کروڑ پاکستانی روپے) لگایا ہے۔ نایاب پینٹنگ کی تاریخی حیثیت اور بین الاقوامی آرٹ ورثے کے لئے اس کی اہمیت کے پیش نظر فرانسیسی حکومت نے اسے ملک سے باہر لے جانے پر پابندی عائد کردی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -