آئی پی ایل انتظامیہ کا ہنگامی اجلاس ، مہار شٹر ریاست سے باہر میچ منتقل کرنے کا عدالتی فیصلے پر اتفاق

آئی پی ایل انتظامیہ کا ہنگامی اجلاس ، مہار شٹر ریاست سے باہر میچ منتقل کرنے ...

  

 راجکوٹ(مانیٹرنگ ڈیسک)آئی پی ایل کے آئندہ کے میچوں کے حوالے سے لیگ انتظامیہ سرپکڑ کر بیٹھ گئی، ممبئی ہائی کورٹ کے فیصلے کے مطابق ریاست مہاراشٹرا میں خشک ساحل اور پانئی کی شدید قلت کے باعث آئی پی ایل کے میچوں کو ریاست سے باہر کہیں اور منتقل کرنے کے احکامات کے بعد بی سی سی آئی کے بڑوں نے گزشتہ روز اجلا س ہوا۔ اجلاس میں آئی پی ایل کے چیئر مین راجیو شکلا، جوائنٹ سیکرٹری انواراگ ٹھاکر اور آئی پی ایل کے چیف آپریٹنگ آفیسر سندررامان بھی موجودتھے۔ اجلاس میں مہاراشٹر ریاست سے تعلق رکھنے والی ممبی انڈسٹریز، رائزنگ پونے سپر جیانٹس کے نمائندہ بھی شریک تھے ۔آئی پی ایل گورننگ کونسل کے چیئر مین راجیو شکلا نے اس بات کی تصدیق کی کہ بی سی سی آئی نے ہائی کورٹ کے فیصلہ کو چیلنج نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔انہوں نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ بی سی سی آئی کی ہمدردیاں مہارا شٹر کے کسانوں کیساتھ ہیں جنہیں رواں برس شدید خشک سالی اور پانی کی قلت کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے تناظر میں ہم مکمل اتفاق کرتے ہیں۔تاہم انہوں نے ممبئی ہائی کورٹ سے اپیل کی کہ آئی پی ایل کے 29 اپریل اور یکم مئی کو دو اہم میچ کھیلیں جائیں گے۔24 گھنٹوں میں یکم مئی کوہونیوالے میچ کا ضروری سامان نتقل نہیں کیا جا سکتا ۔انہوں نے عدالت سے اپیل کی کہ وہ کم از کم ایک میچ مہارا شٹر ریاست میں کرانے کی اجازت دے۔آئندہ میچوں کے وینیو کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ کانپور،وشاکا پٹنام اور رائی پور میں میچ منعقد کئے جا سکتے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ پونے فرنچائز اور چنائی فرنچائز کی جانب سے کولکتہ میں میچ کروانے کی درخواست کو در کر دیا گیا ہے کیونکہ یہ مقام کولکتہ نائٹ رائیڈرز کا ہوم گراؤنڈ ہے لہذٰا یہاں پونے اور چنائی فرنچائز کے میچ منعقد نہیں کئے جا سکتے۔انہوں نے بتایا کہ اس حوالے سے پونے اور چنائی فرنچائزز کو آگاہ کر دیا گیا ہے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -