طور خم ،افغان مہاجرجرین کیخلاف دوربارہ کریک ڈاؤن کا آغاز ،متعدد گھر مسمار

طور خم ،افغان مہاجرجرین کیخلاف دوربارہ کریک ڈاؤن کا آغاز ،متعدد گھر مسمار

  

خیبرایجنسی(بیورورپورٹ)پاک افغان بارڈر طورخم میں رہائش پذیر افغان مہاجرین کیخلاف کریک ڈاون ایک بار پھر شروع ڈیڈ لائن ختم ہو تے ہی گھروں کو مسمار کر دیا گیا آپریشن سیکورٹی خدشات کی بناء پر کیا جا رہا ہے ۔سرکاری ذرائع پاک افغان بارڈر طورخم میں رہائش پذیر افغان مہاجرین کے خلاف ایک بار پھر آپریشن کا سلسلہ شروع کیا گیا جس میں انتظامیہ نے متعدد گھروں کو مسمار کیا سرکاری ذرائع نے بتایا کہ طورخم میں مقیم افغانی مہاجر ین غیر قانونی طور پر رہائش پذیر ہیں پولیٹکل انتظامہ نے کئی بار گھروں کو خا لی کرنے کیلئے نوٹس جاری کئے لیکن انہوں نے نوٹس پر عمل نہیں کیا بعد میں ایک ہفتے کا مہلت دیا گیا جس کے بعد افغان مہاجرین نے خود تین دن کی مہلت مانگی لیکن اسکے باوجود انہوں نے گھروں کو خالی نہیں کیا گیا اس لئے آپریشن کا فیصلہ کیا آپریشن میں خا صہ اور لیو یز فورسز کے اہلکاروں نے حصہ لے رہے ہیں انتظامیہ نے بتایا کہ کسی کے ساتھ کوئی رعایت نہیں کی جائے گی ہر افغانی باشندہ کے ساتھ قانون کے مطابق عمل کیا جا ئے گااس سلسلے میں اسسٹنٹ پولیٹکل ایجنٹ رحیم اللہ محسود نے کہا کہ چند ہفتے پہلے طورخم میں بارڈر فلیگ میٹنگ میں افغان حکام کو واضح طو رپر کہا تھا کہ تمام افغانیوں کو اس بات سے اگا ہ کریں کہ جب وہ پاکستان آئے تو ویزہ پاسپورٹ یعنی قانونی کاغذات کے شرائط پوری کر کے آئیں تاکہ انہیں کسی قسم کا مسئلہ نہ ہو ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -