بگڑے رئیس زادوں کی شادی شدہ خاتون سے زیادتی، بچوں پر تشدد، پولیس ملزموں کی گرفتاری میں ناکام

بگڑے رئیس زادوں کی شادی شدہ خاتون سے زیادتی، بچوں پر تشدد، پولیس ملزموں کی ...
بگڑے رئیس زادوں کی شادی شدہ خاتون سے زیادتی، بچوں پر تشدد، پولیس ملزموں کی گرفتاری میں ناکام

  

قصور (ویب ڈیسک) نشے میں دھت بگڑے رئیس زادے محنت کش کے گھر میں گھس کر اس کی جواں سالہ بیوی کو زیادتی کا نشانہ بناتے رہے، معصوم بچوں کے رونے دھونے پر ملزمان نے بچوں اور عورت کو بدترین تشدد کا نشانہ بنا کر زخمی کردیا۔

روزنامہ خبریں کے مطابق نواحی گاﺅں محمود پورہ کا محنت کش محمد حنیف جو لاہور میں محنت مزدوری کرکے اپنے بیوی بچوں کا پیٹ پالتا ہے کی بیوی مبین بی بی گھر میں ا پنی دو مصوم بیٹیوں 4 سالہ فاطمہ اور 7 ماہ کی ارم فاطمہ کے ہمراہ سوئی ہوئی تھی کہ نومنتخب کونسلر مہر صابر کا اوباش بیٹا علم دین اور اس کے دو ساتھی جو شراب کے نشے میں دھت بتائے جاتے ہیں دیواریں پھلانگ کر اندر داخل ہوئے اور مبین بی بی کو اٹھایا اور ساری رات مظلوم خاتون کو زیادتی کا نشانہ اور معصوم بچیوں کے رونے پر انہیں تشدد کا نشانہ بناتے رہے۔

پولیس نے متاثرہ خاتون کی رپورٹ پر ملزمان کے خلاف مقدمہ تو درج کرلیا مگر ملزمان کی گرفتاری عمل میں لانے میں بری طرح ناکام نظر آرہی ہے۔ اہل علاقہ کا کہنا ہے کہ قصور اور گردونواحی میں خواتین اور بچے بچیوں سے جنسی تشدد کے واقعات میں خطرناک حد تک اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے۔ پولیس کی طرف سے ان سنگین نوعیت کے واقعات میں دانستہ طور پر گرفت کمزور نظر آرہی ہےجبکہ ناقص تفتیش اور پولیس سے ساز باز ہوجانے کی وجہ سے ملزمان بچ جاتے ہیں۔ عوامی حلقوں نے جنسی تشدد کے واقعات کی روم تھام کیلئے موثر اقدامات اٹھانے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید : قصور