انضمام کو 12 لاکھ روپے ماہانہ دینے سے بورڈ کا انکار

انضمام کو 12 لاکھ روپے ماہانہ دینے سے بورڈ کا انکار
انضمام کو 12 لاکھ روپے ماہانہ دینے سے بورڈ کا انکار

  

کراچی(ویب ڈیسک)پی سی بی نے انضمام الحق کو12 لاکھ روپے ماہانہ دینے سے انکار کر دیا، سابق کپتان کو افغان بورڈ بطور کوچ اتنی ہی رقم دے رہا ہے، پاکستانی حکام کے مطابق سابق چیف سلیکٹر ہارون رشید 5 لاکھ روپے لیا کرتے تھے انھیں اس سے کچھ زائد معاوضہ دینا ہی ممکن ہوگا۔ روزنامہ ایکسپریس کے مطابق انضمام الحق کو افغان کرکٹ بورڈ کوچنگ کیلیے ماہانہ 12 لاکھ روپے تنخواہ ادا کرتا ہے۔

انھوں نے پی سی بی کو جب اس بابت بتایا تو حکام نے ان سے معذرت کرلی کہ اتنی رقم دینا ممکن نہ ہوگا، افغانستان انھیں غیرملکی کوچ کا معاوضہ دے رہا ہے جبکہ یہاں وہ مقامی چیف سلیکٹر ہوں گے، بورڈ ہارون رشید کو 5لاکھ روپے ماہانہ دے رہا تھا، اس سے کچھ زائد انھیں دے سکے گا۔اخبار کے مطابق نے 6 سے 7 لاکھ روپے میں ڈیل ہونے کا امکان ہے۔ انضمام الحق نے اپنی مرضی کے سلیکٹرز رکھنے کا مطالبہ بھی کیا جسے بورڈ چیف شہریارخان نے منظور کر لیا، سابق کپتان آئندہ ہفتے فہرست پیش کریں گے۔سابقہ سلیکشن کمیٹی سے بھی ایک سلیکٹر کو لیے جانے کا امکان ہے۔ انضمام بھی پی سی بی کی پیشکش قبول کرنے کا ذہن بنا چکے اور آئندہ ایک2روز میں ان کے تقرر کا باضابطہ اعلان کر دیا جائے گا، بطور چیف سلیکٹر انھیں کار، پیٹرول، موبائل فون و دیگر مراعات بھی حاصل ہوں گی، ان کا کام سال میں بس چند ٹیمیں منتخب کرنا ہی ہوگا، ایسے میں 7 لاکھ روپے ماہانہ ملنا بھی گھاٹے کا سودا ثابت نہیں ہوگا۔

مزید : کھیل