جسٹس اعجازالاحسن کے گھر پر فائزنگ کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے:ڈاکٹر یاسمین راشد

جسٹس اعجازالاحسن کے گھر پر فائزنگ کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے:ڈاکٹر یاسمین ...
جسٹس اعجازالاحسن کے گھر پر فائزنگ کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے:ڈاکٹر یاسمین راشد

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان تحر یک انصاف کی مرکزی رہنما ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہاہے کہ جسٹس اعجازالاحسن کے گھر پر فائزنگ کی جتنی مذمت کی جائے وہ کم ہے، رات کے بعد صبح دوبارہ فائزنگ کا ہو نا پولیس کی کارگردگی پرسوالیہ نشان ہے ، پولیس اور انتظامہ سوئی ہوئی ہے ،صوبے کی امن وامان کی صورت حال ابتر ہو چکی ہے عوام کی جان ومال محفوظ نہیں ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ لاہور سمیت پنجاب میں بڑھتے ہوئے واقعات کو روکا جائے اور پولیس اپنی ذمہ داریوں کو پورا نہیں کر رہی جس کی وجہ سے معاشرے میں جرائم میں خطر ناک حد تک اضافہ ہوا ہے ، پنجاب کے حکمران کے نام نہاد گڈ گورنس کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے ہیں ۔انہوں نے مزید کہا ہے کہ پنجاب کے حکمران ہوش کے ناخن لیں ، مجرمانہ خاموشی اختیار کرنے کے بجائے پولیس کی کارکردگی کو بہتر بنائیں۔ ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا تھا کہ پولیس چوروں کے تحفظ پر معمور ہے،صوبے میں جنگل کا قانون ہے ، پنجاب میں حکومت نام کی چیز نہیں ،پنجاب پولیس اور پنجاب حکومت عوام کے جان و مال کا تحفظ کرنے میں بری طرح ناکام ہو چکی ہے ۔انہوں نے کہا کہ اس واقعے  میں ملوث مجرموں کو کڑی سے کڑی سزا دینی چاہیے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...