اقوام متحدہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے

اقوام متحدہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے

اسلام آباد ( آن لائن ) اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انٹونیو گٹرز نے بھارت اور پاکستان پر زور دیا ہے کہ وہ حل طلب معاملات کو بات چیت کے ذریعے حل کریں۔ اقوام متحدہ سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق اقوام متحدہ کے نائب سیکرٹری جنرل برائے سیاسی معاملات میروسلو جینکا نے دورہ پاکستان کے دوران سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ اور سپیشل سیکرٹری تسنیم اسلم کے ساتھ ملاقات کے دوران بھارت اور پاکستان کے مابین حل طلب معاملات کو جلد مذاکرات کے ذریعے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے اقوام متحدہ کے نمائندے کو بتا یا کہ بھارت گزشتہ چند ماہ کے دوران کنٹرول لائن اور ایل او سی کی مسلسل خلاف ورزی اور نہتے شہریوں پر فائرنگ کررہا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان بھارت کے ساتھ بات چیت کیلئے تیار ہے ، پاکستان چاہتا ہے کہ مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیا جائے ، تہمینہ جنجوعہ نے کہا کہ بھارتی افواج نہ صرف کشمیر میں بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی بلکہ کنٹرول لائن پر بھی کشیدگی پیدا کررہی ہیں۔پاکستان خطے میں امن وامان قائم کرنے کیلئے ہمسایہ ممالک کے ساتھ بات چیت کیلئے تیار ہے۔ سیکرٹری خارجہ نے اقوام متحدہ کے نائب سیکرٹری جنرل سے مطالبہ کیا کہ وہ بھارت پر زور ڈالے اور مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے۔ جینکا نے دہشتگردی کے خلاف پاکستان کی کوششوں کی تعریف کی اور کہا کہ اقوام متحدہ افغانستان کے ساتھ تعلقات کو فروغ دینے اور بارڈر پر تعلقات کو معمول پر لانے کیلئے مذاکرات کا خیر مقدم کرتاہے۔اپنے دورہ کے دوران اقوام متحدہ کے نائب سیکرٹری جنرل نے اقوام متحدہ کی جانب سے پاکستان اور بھارت کیلئے قائم کی جانب والی (یواین ایم اوجی آئی پی) پریڈ کا بھی معائنہ کیا۔

مزید : صفحہ آخر