”آپ نے اس کتے کو بٹھایا ہوا ہے اور۔۔۔“ رانا ثناءاللہ نے لائیو پروگرام میں پی ٹی آئی کے فیاض الحسن چوہان کو ”کتا“ کہہ دیا، پھر وہ کچھ ہو گیا کہ خاتون اینکر کے گال بھی شرم سے لال ہو گئے،ویڈیو نے سوشل میڈیا پر ایسا ہنگامہ برپا کیا کہ پورا پاکستان دیکھتا ہی رہ گیا

”آپ نے اس کتے کو بٹھایا ہوا ہے اور۔۔۔“ رانا ثناءاللہ نے لائیو پروگرام میں پی ...
”آپ نے اس کتے کو بٹھایا ہوا ہے اور۔۔۔“ رانا ثناءاللہ نے لائیو پروگرام میں پی ٹی آئی کے فیاض الحسن چوہان کو ”کتا“ کہہ دیا، پھر وہ کچھ ہو گیا کہ خاتون اینکر کے گال بھی شرم سے لال ہو گئے،ویڈیو نے سوشل میڈیا پر ایسا ہنگامہ برپا کیا کہ پورا پاکستان دیکھتا ہی رہ گیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) ٹاک شوز میں گفتگو کے دوران سیاستدانوں میں تلخ کلامی ہونا معمول کی بات ہے لیکن بعض اوقات معاملہ گالم گلوچ پر بھی پہنچ جاتا ہے اور ایسا ہی کچھ پنجاب کے وزیر قانون رانا ثناءاللہ اور پاکستان تحریک انصاف کے رہنماءفیاض الحسن چوہان کے درمیان لائیو پروگرام میں بھی ہوا۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”یہ لڑکا موٹر سائیکل چوری کرتا ہے اور۔۔۔“ کراچی میں اب تک کا انوکھا ترین چور پکڑا گیا، روز ایک ہی موٹر سائیکل چوری کر کے کیا کرتا تھا؟ حقیقت بتائی تو پکڑنے والوں کی بھی ہنسی چھوٹ گئی 

نجی ٹی وی کے پروگرام میں رانا ثناءاللہ کو گفتگو کیلئے ٹیلی فون لائن پر لیا گیا تھا اور بعد میں پی ٹی آئی کے فیاض الحسن چوہان کو بھی فون لائن پر لے لیا گیا۔ خاتون اینکر نے فیاض الحسن چوہان کو مخاطب کر کے ان سے سوال پوچھنا شروع کیا تو اسی دوران رانا ثناءاللہ کچھ یوں گویا ہوئے ”آپ نے اس کتے کو بٹھایا ہوا ہے ۔“

رانا ثناءاللہ کی جانب سے یہ کہنے کی دیر تھی کہ فیاض الحسن چوہان بھی برہم ہو گئے اور کہا ”یہ ویسے بہت ہی بے غیرت آدمی ہے، میں بڑی عزت کیساتھ اس سے بات کرنا چاہتا تھا لیکن یہ مونچھوں والا بندر انتہائی خبیث آدمی اور قاتل ہے اور بے غیرتی کی انتہاءکرتا ہے۔ میں عزت و احترام کیساتھ اس سے بات کرنا چاہتا تھا اور اس کا چہرہ بے نقاب نہیں کرنا چاہتا تھا لیکن اس نے اپنی اوقات دکھا دی ہے۔

اس مونچھوں والے بندر نے ثابت کیا ہے کہ یہ قاتل بھی ہے، بے غیرت بھی ہے اور بے حس بھی ہے، اسے شرم نہیں آتی کہ اس کی وزارت قانون کے اندر دو مرتبہ ایک معزز جج کے گھر پر حملہ ہو گیا اور یہ بے غیرت آدمی یہاں پر ہمیں بتا رہا ہے کہ کوئی ایسی بات نہیں ہوئی، آپ کی اطلاعات غلط ہیں۔ اسے شرم سے ڈوب مرنا چاہئے کہ پہلا حملہ ہونے کے بعد دوسرا حملہ ہوا اور وہ بھی اس جج پر جو تم لوگوں کی کرپشن، بددیانتی، پیداگیری، نوسربازی کا مقدمہ ڈیل کر رہا ہے۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔مشہور کامیڈین ببو برال کی بیٹی کی تصاویر منظرعام پر آئیں تو پاکستانی نوجوان آنکھیں جھپکنا بھول گئے لیکن وہ آج کل کیا کر رہی ہیں؟ یہ جان کر کوئی بھی آنسوؤں پر قابو نہ رکھ پایا

اسے شرم سے ڈوب مرنا چاہئے لیکن یہ میرے خلاف گالم گلوچ کر رہا ہے۔ حالانکہ میں نے ابتداءنہیں کی، اس نے خود یہ بات کہی ہے، میں نے ابھی گفتگو کا آغاز نہیں کیا اور اس نے گالی دی ہے، یہ ان کا روئیہ ہے، یہ گاڈ فادر مافیا ہے، سسیلین مافیا ہے، لیکن اللہ کی لاٹھی بڑی بے آواز ے، اللہ نے انہیں اس جگہ پر لٹکانا ہے کہ یہ قوم کیلئے نشان عبرت بنیں گے۔“

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /اسلام آباد /پنجاب /لاہور