وہ 5 باتیں جن پر عمل کر لیں تو شادی شدہ زندگی انتہائی خوشگوار ہوجائے گی

وہ 5 باتیں جن پر عمل کر لیں تو شادی شدہ زندگی انتہائی خوشگوار ہوجائے گی

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)شادی دو افراد کا ہی نہیں بلکہ دو خاندانوں کا ملاپ ہوتا ہے، یا یوں کہیے کہ دو مختلف دنیاؤں کا ملاپ ہوتا ہے کیونکہ ہر خاندان کا اپنا مخصوص ماحول اور کلچر ہوتا ہے۔ ان دو مختلف دنیاؤں کا ایک ہو جانا کوئی آسان بات نہیں اور عموماً اس کے لئے بہت صبر اور سمجھ بوجھ کی ضرورت ہوتی ہے۔ میاں بیوی کے درمیان بحث و تکرار یا بعض اوقات لڑائی جھگڑا ہوجانا ایک فطری بات ہے لیکن اس قضیے کو احسن طریقے سے سلجھانا ہی اصل کام ہے۔ 

ویب سائٹ Parhlo کی ایک رپورٹ میں ازدواجی زندگی کے اس انتہائی حساس مسئلے کو موضوع بناتے ہوئے ان چند اہم باتوں کا ذکر کیا گیا ہے جو شادی شدہ زندگی کی اونچ نیچ میں حیرت انگیز توازن لا سکتی ہیں۔ اس ضمن میں سب سے پہلی بات تو یہ ہے کہ اگر آپ سے کچھ غلطی ہوئی ہے تو اس کی ذمہ داری لینی چاہیے۔ غصے کی حالت میں آپ دونوں ایک دوسرے کو برا بھلا کہہ سکتے ہیں یا کوئی الزام عائد بھی کرسکتے ہیں لیکن غصہ ٹھنڈا ہونے پر آپ کو اس بات کی ذمہ داری ضرور لینی چاہیے جو آپ کی جانب سے غلط ہوئی ہے۔

میاں بیوی عموماً ایک دوسرے کی ایسی باتوں سے بھی آگاہ ہوتے ہیں جو دوسروں کے وہم و گمان میں بھی نہیں ہوتیں۔ جتنا بھی لڑائی جھگڑا ہو جائے ان باتوں کو راز ہی رکھیے اور کبھی کسی کے سامنے ایسی بات نہ کیجئے کہ جو آپ کے شریک حیات دوسروں سے خفیہ رکھنا چاہتے ہیں۔ 

اختلافات اور جھگڑا اپنی جگہ لیکن کسی بھی حالت میں عزت و تکریم کا دامن ہاتھ سے نہیں چھوڑنا چاہیے۔ سردمہری اور غصے کا رویہ اپنانا ایک بات ہے لیکن شریک حیات کی توہین کردینا بالکل ہی دوسرا معاملہ ہے۔ بدتمیزی اور توہین ایسا عمل ہے جو دل پر زخم لگاتا ہے، جس کا جلد مندمل ہونا ممکن نہیں ہو پاتا۔ 

اگر آپ کسی بات سے پریشان یا دل گرفتہ ہیں تو اس پر بات کرنے کے لئے مناسب وقت کا انتخاب کریں۔ جب آپ کے شریک حیات پہلے ہی پریشان ہوں، تھکے ہوئے ہوں، بھوک کی حالت میں ہوں یا بیمار ہوں، اس حالت میں حساس موضوعات کو چھیڑنا اور سنجیدہ مسائل کو لے کر بیٹھ جانا معاملات کو سلجھانے کی بجائے مزید بگاڑنے کا سبب بنتا ہے۔ 

جب بات چیت بحث و تکرار میں اور بحث و تکرار لڑائی جھگڑے میں بدل رہی ہوتی ہے تو کسی موقع پر آپ کو اس کا احساس ضرور ہوجاتا ہے۔ عین اسی وقت معاملے کو ٹھنڈ اکرنے کی کوشش کریں کیونکہ اگر آپ اس موقع کو ضائع کریں گے تو بات اتنی بڑھ جائے گی جہاں سے بآسانی واپسی ممکن نہیں رہے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...