نئے انتخابات ہی تمام مسائل کا حل ہے،شاہ اویس نورانی

نئے انتخابات ہی تمام مسائل کا حل ہے،شاہ اویس نورانی

لاہور( نمائندہ خصوصی )جمعیت علماء پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل اور متحدہ مجلس عمل کے ترجمان صاحبزادہ شاہ محمد اویس نورانی نے کہا ہے کہ نئے انتخابات ہی تمام مسائل کا حل ہے۔ حکومت مخالف تحریک چلانے کے لئے تمام اپوزیشن جماعتیں تیار ہیں۔ نظام حکومت جمود کا شکار ہے۔ حکمرانوں کی انتقامی ذہنیت نے انتشار کی فضا پیدا کر رکھی ہے۔ معاشی استحکام سیاسی استحکام کا متقاضی ہے۔ مہنگائی کے طوفان نے عوام کو پریشان کر رکھا ہے۔ حکومت ملک کو معاشی بحران سے نکالنے کی صلاحیت نہیں رکھتی۔ روپیہ اور انسان سستا مگر ضروریات زندگی مہنگی ہو گئی ہیں۔ کوئٹہ اور چمن کے تازہ دھماکے حکومت کی ناکامی ہے۔ حکومت نے نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کے معاملے میں غفلت برتی ہے۔ دھاندلی زدہ حکومت کا خاتمہ کر کے دم لیں گے۔ صدارتی نظام لانے کی سازشیں شروع ہو چکی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے جے یو آئی، جماعت اسلامی اور جمعیت اہل حدیث کے راہنماؤں کے ساتھ ملاقاتوں کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ صاحبزادہ شاہ اویس نورانی نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت نے ملک کا بیڑا غرق کر دیا ہے۔ سیاست میں ڈرامائی تبدیلیاں آنے والی ہیں۔ پچھلے آٹھ ماہ میں ملک بدحال، قوم کنگال اور وزراء خوشحال ہو گئے ہیں۔ عوام کا حکومت پر اعتماد اور اعتبار ختم ہو چکا ہے۔ سیاسی منظر نامے کی تبدیلی کا عمل شروع ہو چکا ہے۔ سال کے آخر تک بہت کچھ بدل جائے گا۔ پی ٹی آئی کی حکومت تاریخ کی ناکام ترین حکومت ہے۔ اپوزیشن اب حکومت کو مزید مہلت نہیں دے گی۔ قبل از وقت انتخابات نوشتہ دیوار ہے۔ حکومت پر بوکھلاہٹ اور گھبراہٹ طاری ہے۔ صاحبزادہ شاہ اویس نورانی کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کے اتحاد کے لئے راہ ہموار ہو چکی ہے۔ اپوزیشن متحد ہو کر میدان میں نکلی تو حکومت کا چلنا مشکل ہو جائے گا۔ نااہل حکومت نے ملک کو آئی سی یو میں پہنچا دیا ہے۔ قومی معیشت وینٹی لیٹر پر چل رہی ہے۔ آئی ایم ایف کی ہدایات کی روشنی میں بننے والی معاشی پالیسیاں عوام دشمنی پر مبنی ہیں۔ قرضوں کے ذریعے ملک نہیں چلایا جا سکتا۔ اسد عمر ناکام ترین وزیر خزانہ ثابت ہوا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1