مستقبل کے حوالے سے قدم بڑا سوچ سمجھ کر اٹھاتی ہوں ، ماہ نور

مستقبل کے حوالے سے قدم بڑا سوچ سمجھ کر اٹھاتی ہوں ، ماہ نور

لاہور ( فلم رپورٹر)فلم اور ٹی وی کی نامور اداکارہ و ماڈل ماہ نور نے کہا کہ انسان کو اپنی زندگی میں ہی اپنی کوتاہیوں اور غلطیوں کی معافی مانگ لینی چاہیے کیونکہ زندگی بڑی مختصر ہے، پھر انسان کومہلت ملتی ہے کہ نہیں یہ کسی کو نہیں پتہ۔میری خدا سے دعا ہے کہ وہ سب کی بیٹیوں کے نصیب اچھے کرے۔

ماہ نور نے کہا کہ ہر انسان اپنی زندگی میں غلطیاں کرتا ہے مگر سمجھدار انسان وہی ہے جو اپنی غلطیوں سے سبق سیکھے ، میں نے بھی اپنی زندگی میں بہت سی غلطیاں کیں اور اب آکر اپنی غلطیوں سے بہت کچھ سیکھا ہے۔مستقبل کے حوالے سے قدم بڑا سوچ سمجھ کر اٹھاتی ہوں ، میں ایک پرسکون زندگی بسر کررہی ہوں۔

انہوں نے کہا ہے کہ ہمیں اپنی زندگی میں ہی خدا سے اپنی غلطیوں کی معافی مانگ لینی چاہیے ،جو سکون ذکر خدا ہے وہ کسی اور چیز نہیں، رمضان المبارک میں دین کے حوالے سے کسی شو کی پیشکش ہوئی تو ضرور کروں گی۔ ان کا کہنا تھا کہ دین اسلام میں عورتوں کو بڑی عزت و احترام دیا گیا ہے ،یہ بات چودہ سو سال سے چلی آرہی ہے مگر ہمارے ہاں اس کے برعکس دیہی علاقوں میں عورت سے غلامانہ سلوک کیا جاتا ہے۔

مزید : کلچر