پی سی بی کا نائٹ ٹیسٹ کھیلنے کے حوالے سے سخت موقف، کرکٹ آسٹریلیا کتنے ملین کا پیکیج دے سکتا ہے؟ خبر آ گئی

پی سی بی کا نائٹ ٹیسٹ کھیلنے کے حوالے سے سخت موقف، کرکٹ آسٹریلیا کتنے ملین کا ...
پی سی بی کا نائٹ ٹیسٹ کھیلنے کے حوالے سے سخت موقف، کرکٹ آسٹریلیا کتنے ملین کا پیکیج دے سکتا ہے؟ خبر آ گئی

  

سڈنی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کی ایڈیلیڈ میں نائٹ ٹیسٹ کھیلنے میں دلچسپی ختم ہونے لگی ہے جبکہ کرکٹ آسٹریلیا نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کو منانے کی کوششیں تیز کر دی ہیں اور اس ضمن میں پاکستانی کرکٹرز کو ایک ملین ڈالرز کا خصوصی پیکیج بھی دیا جا سکتا ہے۔

نجی خبر رساں ادارے ’ایکسپریس نیوز‘ کے مطابق آسٹریلیا ایڈیلیڈ میں ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ کے تسلسل سے انعقاد کیلئے کوشاںہے لیکن مہمان ٹیمیں مسلسل انکار کر رہی ہیں۔ گزشتہ سال بھارت نے رات کو گلابی گیند سے ٹیسٹ میچ کھیلنے سے انکار کیا تھا تاہم کرکٹ آسٹریلیا کو امید تھی کہ رواں برس پاکستانی ٹیم نائٹ ٹیسٹ کھیلنے پر رضامند ہو جائے گی اور ذرائع کا کہنا ہے کہ پی سی بی اس پر راضی بھی ہو گیا تھا لیکن آسٹریلوی ٹیم پاکستان بھیجنے سے انکار پر پاکستان نے بھی نائٹ ٹیسٹ میچ کے حوالے سے سخت ردعمل دینے کا فیصلہ کیا۔

رپورٹ کے مطابق

کرکٹ آسٹریلیا پر واضح کر دیا گیا ہے کہ پاکستانی کرکٹ ٹیم رواں سال دورہ آسٹریلیا کے دوران نائٹ ٹیسٹ میچ نہیں کھیل سکتا۔ پی سی بی کی جانب سے آسٹریلیا سے گزشتہ مہینے متحدہ عرب امارات (یو اے ای) میں کھیلی جانے والی 5 ون ڈے میچوں پر مشتمل سیریز کے 2 میچ پاکستان میں کھیلنے کی درخواست کی تھی مگر کرکٹ آسٹریلیا نے سیکیورٹی ماہرین بھیجے بغیر ہی اس پیشکش کو مسترد کر دیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ کرکٹ آسٹریلیا نے ایڈیلیڈ میں تاریخ کے پہلے نائٹ ٹیسٹ کے انعقاد کو یقینی بنانے کیلئے مہمان کھلاڑیوں کو ایک ملین ڈالر کا خصوصی پیکیج دیا تھا اور اس بار بھی ایسا کیا جا سکتا ہے لیکن ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ اگر کرکٹ آسٹریلیا نے یہ پیشکش کی تو پی سی بی کے موقف میں لچک آئے گی یا نہیں۔ یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ کرکٹ آسٹریلیا پہلے ہی اس موسم گرما کی اپنی دوسری مہمان ٹیم نیوزی لینڈ کو پرتھ میں نائٹ ٹیسٹ کھیلنے پر راضی کرچکا ہے۔

مزید : کھیل