سائنسدانوں نے شہد کی مکھیوں کی زبان دیکھ لی، یہ آپس میں کیا گفتگو کرتی ہیں؟ آپ بھی جانئے

سائنسدانوں نے شہد کی مکھیوں کی زبان دیکھ لی، یہ آپس میں کیا گفتگو کرتی ہیں؟ ...
سائنسدانوں نے شہد کی مکھیوں کی زبان دیکھ لی، یہ آپس میں کیا گفتگو کرتی ہیں؟ آپ بھی جانئے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) کچھ روحانی قسم کے لوگ جانوروں سے گفتگو کرنے کا دعویٰ کرتے ہیں اور اب سائنسدانوں نے بھی شہد کی مکھیوں کی زبان سن لی ہے بلکہ یوں کہیے کہ دیکھ لی ہے اور وہ آپس میں کیا باتیں کرتی ہیں، اس حوالے سے بھی حیران کن بات بتا دی ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق ورجینیا ٹیک کے سائنسدانوں نے شہد کی مکھیوں کی زبان ’ڈی کوڈ‘ کی ہے اور حیران کن انکشاف کیا ہے کہ شہد کی مکھیاں دراصل آواز کے ذریعے نہیں بلکہ اپنی ڈانس نما مخصوص حرکت کے ذریعے ایک دوسرے سے بات کرتی ہیں۔

سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ ”مکھیوں کے اڑنے سے آنے والے بھوں بھوں کی آواز دراصل ان کی زبان نہیں ہوتی بلکہ یہ صرف ان کے تیزی سے چلتے ہوئے پروں کی آواز ہوتی ہے۔ وہ ڈانس کے ذریعے ایک دوسری سے بات کرتی ہیں۔ دوسری مکھیوں کو مختلف پیغام دیتے کے لیے ان کے ڈانس کے مختلف اور مخصوص انداز ہوتے ہیں۔ ایک مکھی ڈانس کے ایک انداز کے ذریعے باقی پورے چھتے کو بتا سکتی ہے کہ اسے کہیں پر کھانے کے لیے کچھ ملا ہے۔

تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ راجر شورچ کا کہنا تھا کہ ”کوئی ایک یا چند ماہر مکھیاں کھانے کی تلاش کرنے کے بعد واپس آتی ہیں اور مخصوص ڈانس کے ذریعے باقی مکھیوں کو اس کے متعلق بتاتی ہے، جس پر باقی مکھیاں بھی چھتہ چھوڑ کر ان کے پیچھے اڑنے لگتی ہے اور تمام راستے ماہر مکھیاں انہیں ڈانس کے مختلف انداز کے ذریعے اس جگہ کے فاصلے اور دیگر چیزوں کے بارے میں بتاتی جاتی ہیں۔اسی طریقے سے ہی وہ دیگر کئی معاملات پر بھی اپنی مخصوص حرکات کے ذریعے دیگر مکھیوں سے بات کرتی ہیں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس