’آئی ایم ایف امدادی پیکج پر عالمی طاقتیں پاکستان کو بلیک میل کر رہی ہیں‘

’آئی ایم ایف امدادی پیکج پر عالمی طاقتیں پاکستان کو بلیک میل کر رہی ہیں‘
’آئی ایم ایف امدادی پیکج پر عالمی طاقتیں پاکستان کو بلیک میل کر رہی ہیں‘

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) معروف معیشت دان اور نیشنل یونیورسٹی آف سائنسز اینڈ ٹیکنالوجی میں سپیشل سائنسز اینڈ ہیومینٹیز کے ڈین ڈاکٹر اشفاق حسن خان نے کہا ہے کہ ”آئی ایم ایف کے امدادی پیکیج پر عالمی طاقتیں پاکستان کو بلیک میل کر رہی ہیں اور سی پیک پر کام سست کرنے یا بالکل ہی اس منصوبے سے دستبردار ہوجانے کے لیے دباﺅ ڈال رہی ہیں۔“

ڈاکٹر اشفاق کا کہنا تھا کہ ”پاکستان اس منصوبے سے دستبردار نہیں ہو سکتا کیونکہ یہ منصوبہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے اور پاکستانی معیشت اور پاکستانی عوام کے لیے اس کے کئی ثمرات ہیں۔میں شروع سے تجویز دیتا آ رہا ہوں کہ پی ٹی آئی حکومت کو اس وقت آئی ایم ایف کے پاس نہیں جانا چاہیے کیونکہ ارضی تژویراتی ماحول یکسر تبدیل ہو چکا ہے۔ ماضی میں پاکستان ہمیشہ ان عالمی طاقتوں کے دائیں طرف کھڑا رہا۔“

ڈاکٹر اشفاق نے مزید کہا کہ ”آج پاکستان ان عالمی طاقتوں کے بائیں طرف کھڑا ہے۔ ان عالمی طاقتوں کو دنیا کی تمام بڑی معیشتوں کا اثر و رسوخ حاصل ہے جس کے ذریعے وہ پاکستان کو قرض دینے کے معاملے پر آئی ایم ایف کو ڈکٹیٹ کر سکتی ہیں۔ حال ہی میں تین امریکی اراکین کانگریس نے مطالبہ کیا ہے کہ آئی ایم ایف پاکستان کو رقم نہ دے کیونکہ وہ یہ رقم چینی قرض کی ادائیگی کے لیے استعمال کر سکتا ہے۔ چنانچہ اس وقت حالات ایسے نہیں ہیں کہ پاکستان آئی ایم ایف کے پاس جائے۔“

مزید : علاقائی /اسلام آباد