حکومت سمال انڈسٹریز کو آسان شرائط پر قرضے دے، مقصود انور

حکومت سمال انڈسٹریز کو آسان شرائط پر قرضے دے، مقصود انور

  

پشاور (سٹی رپورٹر)صوبہ خیبر پختونخوا کے تمام سمال انڈسٹریل اسٹیٹ ایسوسی ایشنز نے ایک متفقہ قرار داد کے ذریعے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کورونا وائرس سے متاثرہ سمال انڈسٹریز کو بنکوں کے ذریعے آسان شرائط پر بلا سود قرضے فراہم کئے جائیں۔بجلی گیس کے بلز کے ادائیگی کو آئندہ تین ماہ تک موخر کرنے کے ساتھ ساتھ اگلے چھ ماہ تک ادائیگی کو مختلف اقساط میں وصول کی جائیں۔ فیکٹری کے ورکرز اور ڈیلی ویجز مزدوروں کے لئے لیبر ڈیپارٹمنٹ کے ساتھ رجسٹریشن کے لئے باہمی مشاورت سے طریقہ کار واضح کیا جائے اور چھوٹے کارخانوں کو ایس او پیز کے تحت صوبہ بھر میں کھولنے کی اجازت دی جائے۔ بجلی کے بلوں کی بروقت ادائیگی میں تاخیر کے باعث پیسکو کنکشن منقطع نہ کئے جائیں اور اضافی سرچارج بھی وصول نہ کیا جائے۔یہ قرارداد گذشتہ روز سرحد چیمبر کے صدر انجینئر مقصود انور پرویز کی زیر صدارت صوبہ خیبر پختونخوا کے مختلف سمال انڈسٹریل اسٹیٹ ایسوسی ایشنز کے عہدیداران‘ چھوٹے صنعتکاروں اور تاجروں کے ایک مشترکہ اجلاس میں پیش کی گئی۔ اجلاس میں سابق نائب صدر ایف پی سی سی آئی حاجی محمد افتخار احمد‘ صدر کوہاٹ روڈ انڈسٹریل اسٹیٹ وحید عارف اعوان‘ سینئر نائب صدر عبدالرشید‘صدر ایبٹ آباد چیمبر خالد لطیف‘کوآرڈینیٹر سمال انڈسٹریل اسٹیٹ ایسوسی ایشن خیبر پختونخوا محمد یونس خٹک‘ چیئرمین ایم ایم آئی ڈی اے سجاد خان‘ شیخ آصف‘ مانسہرہ چیمبر کے عبدالمالک‘ ارشد محمد‘ مہران آفریدی‘ نذر محمد‘ اسداللہ‘ مومن آفریدی‘ سمیع اللہ آفریدی‘ گل شریف‘ حبیب اللہ اور دیگر نے شرکت کی سرحد چیمبر کے صدر انجینئر مقصود انورپرویز نے کہا کہ حکومت کورونا وائرس سے متاثرہ سمال انڈسٹریز کے تعلقات کے ازالہ کے لئے فوری طور پر جامہ مالیاتی پیکیج کا اعلان کریں۔انھوں نے کہا کہ تجا رتی اداروں اور چھوٹے اور بڑ ے انڈسٹر یز میں بجلی اور گیس کے بلز مارچ‘ اپریل اور مئی موخر کئے جائیں اورسمال انڈسٹریز کے قرضے ری شیڈول کئے جا ئیں‘ٹیکسو ں میں کمی کی جا ئے خا ص طور پر چھو ٹے اور در میا نے درجہ کی انڈسٹر یز اور کار وبار اور ا سٹیٹ بنک ا ٓف پا کستان کی جا نب سے مختلف کار وبار ی ا داروں کے قر ضو ں کی ا دائیگی کو ری شیڈ ول کیا جا ئے اور پا لیسی ریٹ کو سنگل ڈ یجیٹ پر لا یا جا ئے۔سرحد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر انجینئر مقصود انور پرویز نے کہا کہ کورونا کے وباء سے شدید متاثر چھوٹے ودرمیانے درجے کے کاروبار سمیت سمال انڈسٹریز اور تاجروں کو بھی مذکورہ پیکیج کے تحت ٹیکسوں میں چھوٹ اور مراعات دی جائیں۔اجلاس میں حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ ماربل اور گرینائیٹ کی درآمد پر فوری پابندی عائد کی جائے تاکہ مقامی انڈسٹری کو فروغ حاصل ہوسکے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -