سرکاری او پی ڈیز بند‘ پرائیویٹ ہسپتالوں کی لوٹ مار‘ انتظامیہ غائب

  سرکاری او پی ڈیز بند‘ پرائیویٹ ہسپتالوں کی لوٹ مار‘ انتظامیہ غائب

  

رحیم یار خان (بیورورپورٹ)سرکاری ہسپتالوں میں او پی ڈی بند ہونے سے پرائیویٹ ہسپتالوں کے مالکان نے لوٹمار کا بازار گرم کررکھا ہے مختلف پرائیویٹ ہسپتالوں کے ڈاکٹرز نے فیس میں اضافہ کرنے کیساتھ ساتھ آپریشن کے اخراجات بھی بڑھا دیئے ہیں اور آپریشن سے قبل ڈاکٹرز کی اکثریت کورونا وائرس کا بہانہ کرکے مریضوں کے ٹیسٹ کرانے کیلئے کہتی ہے (بقیہ نمبر41صفحہ6پر)

جس کی وجہ سے مریض اور لواحقین پریشان ہیں جبکہ کئی ڈاکٹرز نے عارضی طور پر کرونا وائرس کو بہانہ بناکر کلینک بند کردیئے ہیں اور مختلف اوقات میں کلینکس کھول کر ان سے بھاری فیسیں وصول کی جارہی ہیں شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت اس کا نوٹس لے اور ذمہ داران کیخلاف کاروائی عمل میں لائے اس کے علاوہ سرکاری ہسپتالوں کی او پی ڈی فوری طور پر اوپن کی جائے تاکہ مریضوں اور ان کے لواحقین کو مشکلات سے بچایا جاسکے۔

لوٹ مار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -