رواں مالی سال، افغانستان کو برآمدات میں 28۔6فیصد کمی

رواں مالی سال، افغانستان کو برآمدات میں 28۔6فیصد کمی

  

اسلام آباد (اے پی پی) رواں مالی سال کے دوران افغانستان کو کی جانے والی برآمدات میں 6.28 فیصد کمی ہوئی ہے۔ سٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کی رپورٹ کے مطابق جاری مالی سال کے ابتدائی 8 ماہ میں جولائی تا فروری 2019-20ء کے دوران افغانستان کو کی جانے والی برآمدات 728.315 ملین ڈالر تک کم ہو گئیں جبکہ گزشتہ مالی سال میں جولائی تا فروری 2018-19ء کے دوران افغانستان کو 777.153 ملین ڈالر کی برآمدات کی گئی تھیں۔ اس طرح گزشتہ مالی سال کے مقابلہ میں رواں مالی سال کے دوران افغانستان کو کی جانے والی قومی برآمدات میں 48.838 ملین ڈالر یعنی 6.28 فیصد کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔ ایس بی پی کے مطابق جاری مالی سال کے دوران افغانستان سے کی جانے والی درآمدات بھی 11.86 فیصد کی کمی سے 114.723 ملین ڈارل کے مقابلہ میں 101.115 ملین ڈالر تک کم ہوئی تھیں۔ اس طرح گزشتہ مالی سال کے مقابلہ میں روں مالی سال کے ابتدائی 8 ماہ کے دوران پاک افغان دو طرفہ تجارت کے پاکستان کے حق میں تجارتی توازن میں بھی 5.31 فیصد کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔ گزشتہ مالی سال میں جولائی تا فروری 2018-19ء کے دوران 662.430 ملین ڈالر کا تجارتی توازن پاکستان کے حق میں تھا جو رواں سال میں جولائی تا فروری 2019-20ء کے دوران 627.200 ملین ڈالر تک کم ہو گیا ہے۔

مزید :

کامرس -