کرنٹ سے ہلاک نوجوان سپرد خاک،ورثا کا کیبل آپریٹر کیخلاف احتجاج

کرنٹ سے ہلاک نوجوان سپرد خاک،ورثا کا کیبل آپریٹر کیخلاف احتجاج

لاہور(کرائم سیل)گلشن راوی کے علاقہ میں کیبل کی تار سے کرنٹ لگنے سے جاں بحق ہونے والے 24سالہ نوجوان کی نعش کو ضروری کارروائی کے بعد پولیس نے ورثاکے حوالے کر دیا جسے بعد ازاں گلشن راوی کے قبرستان میں سپرد خاک کر دیا گیا۔اہل علاقہ نے اس موقع پر پولیس اور کیبل آپریٹر کے خلاف شدید احتجاج کیا اور روڈ بلاک کر دی۔ متوفی کے اہل خانہ اور اہل علاقہ نے اس موقع پر نمائندہ پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ گلشن راوی کا رہائشی محمد شہزاد دوروزقبل گھر میں کیبل کی تار درست کر رہاتھا کہ اس کو کرنٹ لگ گیا اور وہ جاں بحق ہو گیا۔انہوں نے بتایا کہ علاقہ کی کیبل کی تار میں کرنٹ آنا معمول کی بات بن چکی ہے اور آئے روز کرنٹ لگنے کے واقعات پیش آتے ہیں جس کی وجہ سے اب تک تین ماہ کے عرصہ میں 10افراد شدید زخمی ہو چکے ہیں ۔ان کے مطابق پولیس کو کئی مرتبہ اس حوالے سے آگاہ کیا گیا لیکن پولیس نے کوئی خاطر خواہ کارروائی نہیں کی ہے اہل علاقہ نے اس موقع پر پولیس کے خلاف شدید احتجاج کیا اور نعرے بازی کرتے ہوئے ایک گھنٹے تک روڈ بلاک کیے رکھی بعد ازاں گلشن راوی پولیس نے موقع پر پہنچ کر مظاہرین کے ساتھ مذاکرات کر کے ان کو پر امن طور پر منتشر کر دیا اور متوفی کی نعش کو ضروری کارروائی کے بعد ورثا کے حوالے کر دی جسے بعد ازاں سینکڑوں سوگواروں کی موجودگی میں اس کے آبائی قبرستان میں سپرد خاک کر دیا گیا۔

مزید : علاقائی