صوبائی وزیر داخلہ کرنل(ر) شجاع خانزادہ خودکش حملے میں شہید ہو گئے

صوبائی وزیر داخلہ کرنل(ر) شجاع خانزادہ خودکش حملے میں شہید ہو گئے
صوبائی وزیر داخلہ کرنل(ر) شجاع خانزادہ خودکش حملے میں شہید ہو گئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اٹک(مانیٹرنگ ڈیسک)صوبائی وزیر داخلہ شجاع خانزادہ اپنےڈیرے پر ہونے والےخودکش حملے میں شہید ہو گئے ہیں جبکہ دھماکے میں مزید 18افراد کی شہادت اور متعدد کے شدید زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں ۔ریسکیو ذرائع نے بھی شجاع خانزدہ کی شہادت کی تصدیق کر دی ہے ، تفصیلات کے مطابق دھماکے کے وقت شجاع خانزادہ اپنے ڈیرے پر لوگوں کے مسائل سن رہے تھےکہ دو خود کش حملہ آوروں  نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا جس کے باعث ڈیرے کی چھت زمین بوس ہو گئی اور 20 سے زائد افراد ملبے تلے دب گئےجنہیں ریسکیو کر لیا گیاہے ،18افراد شہید  اور 17افراد زخمی ہو گئے ہیں ہسپتال میں زیر علاج ہیں ۔حساس اداروں کا کہناہے کہ ان کی جان کو خطرہ تھا اور انہیں سیکیورٹی بڑھا نے سے متعلق بھی کہا گیاتھا ۔کاؤںٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کا کہنا ہے کہ 2 دہشت گردوں نے خود کو عمارت کے اندر داخل ہو کر دھماکے سے اڑا لیا ۔

پولیس اور فوج کی کوئیک رسپانس ٹیمیں شجاع خانزادہ کے ڈیرے پر ریسیکیو آپریشن جاری رکھے ہوئے ہیں اور زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا جارہاہے جبکہ تمام ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذکر دی گئی ،وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار نے امدادی سرگرمیوں کو تیز کرنے کیلئے دو ہیلی کاپٹر بھی فراہم کر دیئے ہیں ۔پولیس ذرائع کاکہناتھاکہ ابتدائی طورپر دھماکے کی نوعیت معلوم نہیں ہوسکی تاہم خدشہ ظاہر کیا جارہاہے کہ خود کش حملہ ہوسکتاہے ۔

شادی خیل صوبائی وزیر داخلہ کا آبائی علاقہ ہےاور وہ وہاں سے الیکشن بھی لڑتے تھے ، اتوار کو وہ  اپنے ڈیرے پر موجود ہوتے تھے جہاں وہ اپنے حلقے کے لوگوں کی شکایات بھی سنتے تھے ۔

مزید : راولپنڈی /Headlines