مردار گوشت کا دھندہ ، پنجاب پولیس کا ایک اور کارنامہ سامنے آگیا

مردار گوشت کا دھندہ ، پنجاب پولیس کا ایک اور کارنامہ سامنے آگیا
مردار گوشت کا دھندہ ، پنجاب پولیس کا ایک اور کارنامہ سامنے آگیا

  

اوکاڑہ (نمائندہ پاکستان) حجرہ شاہ مقیم پولیس نے ملی بھگت اور مبینہ رشوت وصولی کے بعد مردار جانوروں کا گوشت بیچنے والے تین ملزم رہاکردیئے جبکہ دیگر تین کو قانونی کارروائی کا سامنا ہے ، اس دوہرے معیار پر سوالات اٹھناشروع ہوگئے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق پیٹرولنگ پولیس قلعہ سوندھا سنگھ نے حرام گوشت کا دھندا کرنیوا لے چھ ارکان کو رنگے ہاتھوں گرفتار کیا اورمیڈیا کے نمائندے بلوا کرحوالات میں بند ملزمان کی تصاویر بنوائیں اور بتایاکہ محمد اویس ، محمد ارشد ، محمد ابرار قریشی اوررحمت علی قصائی وغیرہ پلاسٹک کے توڑوں میں مردہ بھینس اور گائے کا گوشت اسلام آباد کے ہوٹلوں پر فروخت کیلئے لیجارہے تھے کہ مخبری پر پٹرولنگ پولیس کے اہلکاروں نے بس کی چھت پر سبزیوں میں چھپایاگیا گیا گوشت برآمد کرلیا اور مزید پوچھ گچھ کے بعد کیری ڈبہ میں سوار مذکورہ ملزمان کو گرفتار کرلیا جنہیں بعد ازاں حجرہ پولیس کے حوالہ کردیا گیا ۔پٹرولنگ پولیس کی طرف سے حوالے گئے چھ میں سے تین ملزمان کو پنجاب پولیس نے چھوڑدیا جبکہ حجرہ پولیس نے تین ملزمان پر مقدمہ درج کرلیا۔

مزید : اوکاڑہ