افغانستان: فورسز کا آپریشن ‘ 92 شدت پسند ہلاک 11فوجی بھی مارے گئے

افغانستان: فورسز کا آپریشن ‘ 92 شدت پسند ہلاک 11فوجی بھی مارے گئے
افغانستان: فورسز کا آپریشن ‘ 92 شدت پسند ہلاک 11فوجی بھی مارے گئے

  

کابل (اے پی پی) افغانستان میں سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کے دوران 92 شدت پسندوں کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ افغان وزارت دفاع کی طرف سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ ملک کے مختلف حصوں میں عسکریت پسندوں کے خلاف کارروائی کی گئی جس میں 92 عسکریت پسند ہلاک اور درجنوں زخمی ہو گئے۔

بیان میں ان کارروائیوں میں 11 فوجیوں کی ہلاکت کی تصدیق کی گئی ہے۔ زیادہ تر ہلاکتیں پکتیا اور پکتیکا میں ہوئیں جہاں بالترتیب 40 اور 30 عسکریت پسند ہلاک ہو گئے۔ صوبہ غور میں فضائی کارروائی میں 5 عسکریت پسندوں کی ہلاکت کی تصدیق کی گئی ہے ۔ وزارت دفاع کے مطابق یہ حملہ ضلع پاسہ بند میں کیا گیا ۔ ہلاک ہونے والے افراد کا تعلق طالبان گروپ سے بتایا گیا ہے ۔ صوبہ ننگر ہار میں فضائی حملے میں شدت پسند تنظیم داعش کے متعدد ارکان کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا گیا ہے ۔ کارروائی ضلع آچین کے علاقہ پیخہ میں کی گئی جس میں داعش کے دو اہم ارکان کی ہلاکت کا دعویٰ کیا گیا ہے۔ مشرقی صوبہ نورستان میں طالبان کے ایک مربوط حملے میں ہلاکتوں کا خدشہ ہے۔

افغان حکام نے تصدیق کی ہے کہ طالبان نے ضلع ونت ویگام میں مربوط حملے کئے جس کے بعد فورسز اور عسکریت پسندوں کے درمیان شدید جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے۔ صوبہ لوگر میں طالبان نے 8 سکولوں کو زبردستی بند کرادیا۔

مزید : بین الاقوامی