علاج میں تاخیرپر خاتون نے لیڈی ڈاکٹر کو مبینہ طور پر تھپڑ مار دیا

علاج میں تاخیرپر خاتون نے لیڈی ڈاکٹر کو مبینہ طور پر تھپڑ مار دیا

لا ہور (جنر ل ر پو رٹر ) علاج معالجہ شروع کرنے میں تاخیرپر خاتون نے گنگا رام ہسپتال میں لیڈی ڈاکٹر کو مبینہ طور پر تھپڑ دے مارا ، خاتون خود کو پولیس اہلکار کہتی ہوئی ہسپتال سے فرار ، ڈیوٹی ڈاکٹرز نے ہڑتال کر دی۔تفصیلا ت کے مطا بق گنگارام ہسپتال کی ایمرجنسی میں رات گئے گلشن راوی کی رہائشی رابعہ نامی خاتون اپنی مریضہ کے علاج معالجے کے لیے آئی ، ایمرجنسی میں رش ہونے کے باعث خاتون نے ڈیوٹی پر مامور لیڈی ڈاکٹر کو جلدی چیک اپ کرنے کو کہا۔لیڈی ڈاکٹر نے رابعہ نامی خاتون کو باری کا انتظار کرنے کو کہا تو وہ طیش میں آگئی اور اس نے ڈاکٹر کو تھپڑ دے مارا ، خاتون کے اس رویے پر ڈیوٹی پر مامور سیکیورٹی گارڈز پہنچے تو وہ انہیں بھی دھمکیاں دیتی رہی اور خود کو پولیس اہلکار بتاتے ہوئے فرار ہوگئی۔واقعہ کے بعد ڈی ایم ایس ڈاکٹر کرن سمیت دیگر ڈاکٹرز نے ایمرجنسی میں کام بند کر دیا ، ڈاکٹرز کی ہڑتال کے باعث مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1