کشمیر تقسیم بر صغیر اور اقوام متحدہ کا نا مکمل ایجنڈا ،مسئلے کا پر امن حل چاہتے ہیں :نوا ز شریف

کشمیر تقسیم بر صغیر اور اقوام متحدہ کا نا مکمل ایجنڈا ،مسئلے کا پر امن حل ...

اسلام آباد( اے این این ) وزیراعظم نوازشریف نے کشمیرکو تقسیم برصغیراور اقوام متحدہ کا نامکمل ایجنڈا قراردیتے ہوئے کہاہے کہ پاکستان اس دیرینہ تنازعے کاپرامن حل چاہتا ہے ، بھارت سمیت تمام ہمسایہ ملکوں کیساتھ اچھے تعلقات کے خواہاں ہیں ، پاکستان کے شہری ہونے کی حیثیت سے اقلیتوں کومساوی حقوق حاصل ہیں ، حکومت ان کے حقوق کے تحفظ کیلئے پرعزم ہے ۔پیرکونوازشریف سے وزیراعظم ہاؤس میں آزاد کشمیر میں مسلم لیگ (ن) کے نامزد صدارتی امیدوار مسعود خان اورمسلم لیگ (ن)سندھ کے رہنماء ڈاکٹر شام سندر ایڈوانی نے الگ الگ ملاقات کی۔وزیراعظم سے مسعودخان کی ملاقات میں سیاسی صورتحال خصوصاً آزادکشمیرمیں صدارتی انتخاب سے متعلق معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ نواز شریف نے مسعود خان کی صلاحیتوں پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے مسئلہ کشمیر کو بھرپور طریقے سے سفارتی سطح پر دنیا کے سامنے اجاگر کیا اورامید ہے وہ بطور صدر بھی کشمیر کا مسئلہ بھرپور طریقے سے لڑیں گے۔ انہوں نے کہاکہ کشمیر تقسیم برصغیر اور اقوام متحدہ کا نامکمل ایجنڈا ہے ، پاکستان اس مسئلے کا مذاکرات کے ذریعے پرامن حل چاہتا ہے ہم بھارت سمیت تمام ہمسایہ ممالک کے ساتھ اچھے تعلقات کے خواہش مند ہیں۔اس موقع پر مسعود خان نے آزاد کشمیرکے صدرکے عہدے کیلئے پارٹی کاامیدوار نامزد کرنے پر وزیراعظم نواز شریف کا شکریہ ادا کیا اور یقین دلایا کہ وہ عوام کی خدمت میں کوئی کسر نہیں چھوڑوں اور اس کیلئے کوئی دقیقہ فروگزاشت نہیں کریں گے ۔دریں اثناء مسلم لیگ(ن)سندھ کے رہنما ء ڈاکٹر شام سندر ایڈوانی سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم نے قومی نصب العین اور ترقی کیلئے اقلیتوں کے موثر کردار اور قربانیوں کی تعریف کی ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ کیلئے پرعزم ہے کیونکہ ملک کے شہری ہونے کی حیثیت سے انہیں مساوی حقوق حاصل ہیں۔ ڈاکٹر شام سندر نے کہا کہ سندھ میں اقلیتوں نے وزیراعظم کے ترقی کے ایجنڈے اور ان کے حقوق کے تحفظ کیلئے اقدامات کو بہت سراہا ہے۔ملاقات کے دوران سیاسی صورتحال اور پارٹی کے انتظامی امور پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔سیاسی امور کے بارے میں وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر آصف کرمانی بھی ملاقات کے موقع پر موجود تھے۔

مزید : صفحہ اول