معدنیات کی چیک پوسٹ ختم کرنے پر جواب طلب

معدنیات کی چیک پوسٹ ختم کرنے پر جواب طلب

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ کے جسٹس قیصررشید اور جسٹس روح ا لامین چمکنی پرمشتمل دورکنی بنچ نے ڈی آئی جی کوہاٹ کو کوہاٹ سیمنٹ کے قریب واقع معدنیات کی چیک پوسٹ ختم کرنے سے روکتے ہوئے پولیس حکام سے جواب مانگ لیاہے فاضل بنچ نے یہ احکامات گذشتہ روز حبیب اللہ نامی ٹھیکیدار کی جانب سے دائررٹ پرجاری کئے رٹ میں موقف اختیار کیاگیاہے کہ درخواست گذار نے محکمہ معدنیات سے کوہاٹ میں واقع معدنیات پرٹیکس وصولی کے لئے 19 چیک پوسٹوں کاٹھیکہ باقاعدہ طورپر حاصل کررکھاہے تاہم ڈی آئی جی اورڈی پی او کوہاٹ اب درخواست گذار کاکوہاٹ سیمنٹ فیکٹری کے قریب واقع چیک پوسٹ ختم کرناچاہتی ہے جبکہ مذکورہ چیک پوسٹ سے اس کی90فیصد ریونیوہوتی ہے جبکہ پولیس حکام کو محکمہ معدنیات کی چیک پوسٹ ختم کرنے کاکوئی اختیار حاصل نہیں ہے لہذاپولیس کے اقدام کو کالعدم قرار دیا جائے فاضل بنچ نے ابتدائی دلائل کے بعد کوہاٹ پولیس کو چیک پوسٹ کے خاتمے سے روکتے ہوئے جواب مانگ لیاہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر