اس آدمی نے 25سال سے پیزا کے علاوہ کچھ نہیں کھایا، جسم میں کیا تبدیلی آئی اور صحت کیسی ہے؟ آپ کو بھی ضرور معلوم ہونا چاہیے

اس آدمی نے 25سال سے پیزا کے علاوہ کچھ نہیں کھایا، جسم میں کیا تبدیلی آئی اور ...
اس آدمی نے 25سال سے پیزا کے علاوہ کچھ نہیں کھایا، جسم میں کیا تبدیلی آئی اور صحت کیسی ہے؟ آپ کو بھی ضرور معلوم ہونا چاہیے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نیویارک(نیوزڈیسک) ہر آدمی زندگی میں مختلف چیزیں کھاکر زندہ رہتا ہے اور یہ انسانی جبلت ہے کہ وہ کھانے پینے میں مختلف اشیاء پسند کرتا ہے لیکن آج ہم آپ کو ایک ایسے انسان کے بارے میں بتائی گے جو 25سال سے صرف چیز پیزا ہی کھارہا ہے۔امریکی ریاست میری لینڈ کا رہائشی ڈان جینسین کا کہنا ہے کہ وہ اپنے لڑکپن سے پیزا کی محبت میں گرفتار ہوا اور آج تک صرف پیزا کھاکر زندہ ہے۔ہاورڈ یونیورسٹی میں پڑھنے کے دوران وہ ڈامینوز پیزا میں ملازمت کرتا رہا جہاں اس کی پیزا سے رغبت مزید بڑھی اور وہ دن میں دو14انچ والے پیزے کھاجاتا ہے۔اسے ذیابیطس لاحق ہوچکی ہے لیکن اس کا کہنا ہے کہ یہ پیزا کی وجہ سے نہیں ہوئی بلکہ اس کے خاندان میں یہ بیماری عام ہے۔اس کا کہنا ہے کہ اس کی صحت ٹھیک ہے اور اس کے ڈاکٹرز بھی اس سے اتفاق کرتے ہیں لیکن ایک ماہر غذا نے اسے مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنے کھانے کی معمولات میں تبدیلی لائے ورنہ وہ آنے والے دنوں میں مشکلات کا شکار ہوسکتا ہے۔

اگر آپ بھی سوچ رہے ہیں کہ پیزا کھانے سے آپ بھی ڈان کی طرح صحت مند رہیں گے تو یہ غلط سوچ ہے کیونکہ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ پیزا ایک ایسی چیز ہے جس کی وجہ سے انسان موٹاپے کاشکارہوتا ہے اور اس کی وجہ سے معدے کی خرابی ایک معمول بن جاتی ہے۔چیز کو جنک فوڈ میں شامل کیا جاتا ہے جو کہ انسانی صحت کے لئے زہر قاتل تصور ہوتا ہے۔

مزید : تعلیم و صحت