ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے نئے چیف ایگزیکٹو آفیسرز مقرر کرنیکا فیصلہ

ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے نئے چیف ایگزیکٹو آفیسرز مقرر کرنیکا فیصلہ

  



ملتان ( سٹاف رپورٹر)30 ستمبر کے بعدعہدوں سے ہٹائے جانے کے حکومتی فیصلے پر صوبے بھر کے چیف ایگزیکٹو آفیسرز ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیزمیں مایوسی کی لہر دوڑ گئی ۔ کام میں دلچسپی چھوڑ دی۔ بتایا گیا ہے کہ حکومت پنجاب نے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے نئے چیف ایگزیکٹو آفیسرز مقرر کرنے کا فیصلہ کیا ہے جو یکم اکتوبر سے چارج لیں گے ۔ موجودہ سی ای اوز کو 30اکتوبر تک کام کرنے کی(بقیہ نمبر55صفحہ12پر )

اجازت دی گئی ہے ۔اس فیصلے سے صوبے بھر کے سی ای اوز نا خوش ہیں ۔ ان کا کہنا ہے کہ انہیں صحیح طریقے سے کام کرنے ہی نہیں دیا گیا ۔ یکم جنوری 2017کو ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے قیام کا نوٹیفکیشن جاری کیا گیا اور ای ڈی اوز ایجوکیشن کو ہی سی ای او ز بنادیا گیا ۔ اختیارات کاواضح تعین نہ ہونے کے باعث مسائل درپیش رہے۔ بعد ازاں سی ای اوز او کو ای ڈی اوز ایجوکیشن کے اختیارات دے دئیے گئے اوراب 7ماہ کے بعد فیصلہ کیا گیا ہے کہ نئے سی ای اوز یکم اکتوبر سے کام کریں گے جو کسی بھی محکمے سے ہوں گے۔ اس صورتحال میں موجودہ سی ای اوز نا خوش ہیں کہ انہیں ٹھیک طریقے سے کام ہی نہیں کرنے د یا گیا۔ اسی بنا پر انہوں نے کام میں دلچسپی ہی چھوڑ دی ہے کہ جب اس سیٹ پر رہنا ہی نہیں ہے تو پھر زیادہ تگ ودو کرنے کی ضرورت ہی نہیں ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...