پولیس تشدد، حادثہ میں 2افراد جاں بحق، عورت کی سرکٹی لاش برآمد

پولیس تشدد، حادثہ میں 2افراد جاں بحق، عورت کی سرکٹی لاش برآمد

  



وہاڑی، سیت پور، حاصل پور، چشتیاں ، کہروڑ پکا(نمائندگان) پولیس تشدد اور حادثہ میں 2افراد جاں بحق، حاصل پور میں مزدور اور چشتیاں سے سرکٹی لاش برآمد وہاڑی سے بیورو رپورٹ ، نمائندہ خصوصی کے مطابق ٹھینگی کے نواحی گاؤں161ڈبلیوبی میں دو گروپوں کے تصادم کے نتیجہ میں تھانہ ٹھینگی پولیس اطلاع ملنے پر اسی گاؤں کے رہا ئشی 60سالہ محمد رفیق کو گرفتار کرنے گئی تو دوران گرفتاری محمد رفیق جاں بحق ہو گیا ، محمدرفیق کے ورثاء نے (بقیہ نمبر41صفحہ12پر )

الزام لگایا کہ وہ ٹھینگی پولیس کے تشدد سے ہلاک ہوا ہے جبکہ ایس ایچ او ٹھینگی کے مطابق محمد رفیق دل کا دورہ پڑنے سے جا ں بحق ہو ا ہے ڈی پی او عمر سعید ملک نے انکوائری کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ ایس پی انویسٹی گیشن سے بارہ گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی۔ سیت پور سے نمائندہ خصوصی ، نمائندہ پاکستان کے مطابق سیت پور سے علی پورروڈ بستی مڑیچی کے مقام پر موٹر سائیکل سوار اور پھٹہ رکشہ تیز رفتاری کے باعث آپس میں ٹکرا گئے۔ جس کے نتیجے میں اظہر عباس ولد محمد جمیل نامی شخص موقع پر دم توڑ گیا۔ جبکہ محمد کاشف شدید زخمی حالت میں علی پور ہیڈ کوارٹرہسپتال مقامی لوگوں کی مدد سے ریفر کیا گیا۔ لنگر واہ پیٹرولنگ پولیس ایک گھنٹہ تک کالز کرنے کے باوجود موقع پر امداد کے لیے نہ پہنچی۔مقامی تھانہ سیت پور کے ایڈیشنل ایس ایچ او غلام اکبر نے موقع پر پہنچ کر لاش تحویل میں لیکر کارروائی عمل میں لائی۔ اہل علاقہ جن میں غلام علی خان۔عبدالغفار ۔عبدالستار ۔محمد اشرف ۔ عبدالغفور سمیت دیگر نے شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکمرانوں کو چاہیے کہ سیت پور علی پور روڈ کو کشادہ کیا جائے۔ حاصل پور سے نامہ نگار کے مطابق حاصل پور کے نواحی گاؤں 160 مراد کا رہائشی چار بچیوں کا باپ ساجد پرویز لاہور میں محنت مزدوری کرتا تھا واپس گھر گاؤں آیا ہوا تھا کہ اس کی لاش حاصل پور چھوناوالا روڈ کے کنارے پر پڑی ہوئی تھی کہ اطلاع ملنے پر پولیس نے لاش قبضہ میں لیکر تحقیقات شروع کرد یں اور پوسٹ مارٹم کے بعد لاش ورثہ کے حوالے کردی ۔ پولیس کے مطابق ساجد پرویز ایک حادثہ میں جاں بحق ہوا ہے۔ پولیس تحقیقات کر رہی ہے ۔ چشتیاں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق کوٹھی 47000کے قریب نہر سے ایک نامعلوم عورت کی نعش ملی ہے ۔ کسی نامعلوم شخص نے قتل کر کے دونوں ٹانگیں گھٹنوں سے اور سر غائب کر کے نہر میں پھینک دی ہے ۔سر دونوں ٹانگیں گھٹنوں سے کٹے ہوئے ہیں پولیس کو محمد بلال نامی شخص نے اطلاع دی جس پر شہر فرید پولیس نے نعش کو قبضہ میں لے کر تفتیش شروع کر دی ہے ۔ کہروڑپکا سے تحصیل رپورٹر کے مطابق نصیر دی واہن میں اقبال جھبیل کی بیوی نے گھریلو حالات سے دلبرداشتہ ہوکرکالا پتھر پی لیا اس کو فی الفور ہسپتال لے جایا گیا مگر وہ جانبر نہ ہو سکی اور دم توڑ گئی اس کو نمازے جنازہ کے بعد سپرد خاک کر دیا گیا۔

حادثات

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...