امجدسنڈل کرپشن کیس:نیب نے 2 شریک ملزموں کا جسمانی ریمانڈ حاصل کرلیا

امجدسنڈل کرپشن کیس:نیب نے 2 شریک ملزموں کا جسمانی ریمانڈ حاصل کرلیا

  



لاہور(خبرنگار) قومی احتساب بیورو (نیب) لاہور نے معروف لینڈ ایکوزیشن کلکٹر (ایل اے سی) امجد سنڈل کرپشن کیس میں دو شریک ملزم غلام رسول اور عبدالغفور کو گرفتار کرکے احتساب عدالت کے روبرو پیش کیا اور جسمانی ریمانڈ حاصل کرکے ریکوری کیلئے تفتیش کا دائرہ کار وسیع کر دیا ہے۔ ملزموں پر الزام ہے کہ انہوں نے آپس کی ملی بھگت سے بوگس کاغذات پر ڈیرہ غازی خان میں 2 کر و ڑ57لاکھ رو پے کی زمین کی خریدوفروخت کرتے ہوئے حکومتی خزانے کو خطیر رقم کانقصان پہنچایا۔نیب لاہور نے سال02ء میں گرفتاری کے بعد مر کز ی ملزم ایل اے سی امجد سنڈل اور دیگر ملزموں کیخلاف ریفرنس دائر کیا جبکہ احتساب عدالت کی جانب سے ملزم کو7سال قید اور 67 لا کھ رو پے جرمانہ کی سزا سنائی گئی جسے ملزم نے اعلیٰ عدالت میں چیلنج کردیا جہاں سے فیصلہ حق میں نہ آنے پر نیب لاہور نے سپریم کورٹ سے رجوع کر رکھا ہے۔ علاوہ ازیں شریک ملزم غلام رسول اور عبدالغفور کو اشتہاری قرار دیدیاگیا جس پر گزشتہ روز دونوں کو گرفتار کر لیا گیا جن پرالزام ہے کہ انہوں نے مرکزی ملزم کو بوگس کاغذات تیار کر کے دیئے اور موجودہ زمین سے کئی گناہ زیادہ رقبہ ظاہر کر کے کروڑوں رو پے کی لوٹ مار کی۔نیب لاہور نے ملزموں کو احتساب عدالت کے روبرو پیش کیا اور جسمانی ریمانڈ حاصل کرکے ریکوری کیلئے تفتیش کا دائرہ کار وسیع کر دیا ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...