منشیات پیدا کرنیوالا بڑا ملک افغانستان، امریکہ ہم سے ڈومور کا مطالبہ ترک کرے، سینیٹ قائمہ کمیٹی داخلہ

منشیات پیدا کرنیوالا بڑا ملک افغانستان، امریکہ ہم سے ڈومور کا مطالبہ ترک ...

  



اسلام آباد(این این آئی) سینیٹ قائمہ کمیٹی داخلہ سینیٹر رحمان ملک کی صدارت میں منعقد ہونیو الے اجلاس میں کوئٹہ ،لاہور ، اپردیر میں بم دھماکوں کی شدید الفاظ میں مذمت اور شہید ہونیوالوں کیلئے مغفرت کی دعا کی گئی۔ چیئرمین کمیٹی نے کہا منشیات سب سے زیادہ پیدا کرنے والا ملک افغانستان ہے ۔ امریکی حکومت اور افغانستا ن میں موجود فورسز منشیات ، سمگلنگ کی روک تھام کے اقدامات کریں، امریکہ اب ہم سے ڈومور کا مطالبہ بند کرے ، انہوں نے اے این ایف کو پی آئی اے کے جہازوں سے منشیات برآمدگی پر شاباس دی اور کہا اے این ایف میں افرادی قوت کی کمی ختم کرنے کیلئے بھرتیاں کی جائیں اور مالی مدد میں اضافہ کیا جائے۔اس موقع پر وفاقی وزیر انسداد منشیات صلاح الدین ترمزی کا کہنا تھا وزارت کو مسائل کا سامنا اور ملازمین کی شدید کمی ہے ۔ زیادہ تر دفاتر کرایے کی عمارتوں میں ہیں،منشیات سمگلنگ پر سزائے موت کی وجہ سے عالمی ادارے پہلے کی طرح تعاون نہیں کررہے ، وزارت انسداد منشیات کی مشکلات جلد حل کرے ۔ جس پر چیئر مین کمیٹی نے مکمل معاونت کی یقین دہانی کرائی ،جبکہ اے این ایف حکام نے اجلاس کو آگاہ کیا کہ ایئر پورٹس پر ایسے راستے موجود ہیں جہا ں سے صرف منشیات نہیں اسلحہ بھی سمگل کیا جاسکتا ہے، ہیتھرو ، کراچی ، اسلام آباد ایئرپورٹس سے منشیات برآمدگی پر 14گرفتاریاں کیں۔ ایک مجرم افغانی تھا اور دو پاکستانی زیر زمین چلے گئے ہیں۔ گینگ میں مختلف شعبوں کے پی آئی اے ملازمین شامل تھے، اب جہازوں کی باقاعدہ چیکنگ جاری ہے۔ سینیٹر جاوید عباسی اور شبلی فراز نے کہا ایسا میکنزم تیا ر کیا جائے کہ اس طرح کا دوبارہ واقعہ نہ ہوسکے جو ملکی بدنامی کا باعث بنتا ہے۔ سینیٹر شاہی سید نے کہا وزارت انسداد منشیات ، داخلہ ، وزارت قانون سے مشاورت کرکے کمیٹی میں قانونی مسودہ لائیں۔ وفاقی وزیر صلاح الدین ترمذی نے کہا صوبوں سے تعاون کیلئے رابطے بڑھارہیں ہیں۔اس موقع پر سینیٹر شبلی فراز اپنے گھر میں ہونیوالی چوری کے معاملہ پر اسلام آباد پولیس کی غیر ذمہ داری پر اجلاس سے واک آؤٹ کرگئے، جبکہ ایس ایس پی اسلام آباد نے کہا مدعی شبلی فراز کے بھائی ہیں، 7 میں سے 3ملزم گرفتار کیے جاچکے ہیں، 4افغانستان فرار ہوگئے ہیں ۔ چیئرمین کمیٹی نے کہا ایف آئی اے کے ذریعے انٹر پول کو گرفتاری کے لیے خط لکھیں۔ جبکہ انہوں نے سینیٹرز مختیاراحمد دھامراہ عاجز اور جاوید عباسی پر مشتمل کمیٹی بھی قائم کی جو معاملے کو دیکھے گی۔ایف آئی اے حکام نے اجلاس کو بتایا ملک بھر میں 5ہزار کے قریب ہاؤسنگ سوسائٹیاں ہیں ،ایس ای سی پی کے پاس بھی ایسی سو سائٹیاں رجسٹرڈ ہیں جن کے پاس زمین ہے اور نہ ہی ریکارڈ،جس پر کمیٹی نے آئندہ اجلاس میں نیب کوطلب کرلیا۔

مزید : صفحہ آخر