یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے وائس چانسلر کی تعیناتی عدالتی فیصلے سے مشروط

یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے وائس چانسلر کی تعیناتی عدالتی فیصلے سے مشروط

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے وائس چانسلر کی تعیناتی کو عدالتی فیصلے سے مشروط کردیاہے، عدالت نے وفاقی حکومت، حکومت پنجاب اور پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیاہے۔لاہور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس سید منصور علی شاہ نے کیس کی سماعت شروع کی تودرخواست گزار پروفیسر ڈاکٹر عبدالمنان بابرکے وکیل ملک اویس خالد نے موقف اختیار کیا کہ یونیورسٹی کے وائس چانسلر کی تعیناتی کے لئے قائم کمیٹی میں ہائر ایجوکیشن کمیشن پنجاب کے چیئرمین کو شامل نہیں کیا گیا، انہوں نے بتایا کہ ایچ ای سی کے وائس چانسلر کی تعیناتی میں پی ایچ ڈی کی ڈگری رکھنے والے امیداوروں کو نظر انداز کیا جا رہا ہے جو کہ آئین کے تحت شفافیت کے اصولوں کی نفی ہے، انہوں نے کہا کہ عدالت ایچ ای سی کے وائس چانسلر کی تعیناتی کے طریقہ کار کو شفاف بنانے کا حکم دے،انہوں نے استدعا کی کہ وائس چانسلر کی تعیناتی کے لئے پی ایچ ڈی رکھنے والے امیدواروں کو نظر انداز کرنے سے روکنے کے بھی احکامات صادر کرے جس پر عدالت نے یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے وائس چانسلر کی تعیناتی کو عدالتی فیصلے سے مشروط کردیاہے، عدالت نے وفاقی حکومت، حکومت پنجاب اور پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیاہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...